ودہولڈنگ ٹیکس کیخلاف تاجر برادری آج سے احتجاجی تحریک شروع کریگی

September 2, 2015 5:02 pm0 commentsViews: 19

اسلام آباد میں احتجاجی مظاہرے اور ریلیاں منعقد کی جائیں گی‘4 ستمبر کو بینکوں سے لین دین کا بائیکاٹ کریں گے
تاجر 9 ستمبر کو ملک گیر ہڑتال کریں گے‘ آل پاکستان تاجر اتحاد کے مرکزی صدر کاشف چوہدری کی پریس کانفرنس
اسلام آباد( نیوز ڈیسک) آل پاکستان تاجر اتحاد کے مرکزی صد ر محمد کاشف چوہدری نے کہا ہے کہ0.3فیصد ود ہولڈنگ ٹیکس کے خلاف ملک بھر کی تاجر برادری آج 2 ستمبر کو ملک گیر یوم احتجاج منائیگی‘ اس سلسلے میں تمام صوبائی اور وفاقی دارالحکومت میں احتجاجی مظاہرے اور ریلیاں منعقد کی جائیں گی جبکہ4 ستمبر کو ایک دن کیلئے بینکوں سے لین دین کا بائیکاٹ کرتے ہوئے بینکوں سے کسی قسم کا کاروبار نہیں کیا جائیگا اور9 ستمبر کو ملک بھر میں مکمل اور تاریخی شٹر ڈائون ہڑتال کی جائیگی‘ اگر حکومت نے اس کے باوجود تاجروں کے مطالبات کو تسلیم نہ کیا تو 7 اکتوبر کو دوبارہ ملک گیر شٹر ڈائون ہڑتال او رحکومت کیخلاف احتجاجی تحریک کا آغاز کیا جائیگا‘ انہوں نے کہا کہ حکومت نے تاجروں کی جانب سے انہیں دیئے گئے وقت کو تاجروں کی کمزوری سمجھتے ہوئے تا حال ود ہولڈنگ ٹیکس کو برقرار رکھا ہوا ہے جو ریاستی سطح پر بھتہ خوری کے مترادف ہے‘ جسے ملک بھر کے تاجروں نے یکسر مسترد کردیا ہے‘ ان خیالات کااظہار انہوں نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر آل تاجر اتحاد کے سیکریٹری اطلاعات ضیاء احمد موجود بھی تھے‘ کاشف چوہدری نے کہا کہ0.3 فیصد ود ہولڈنگ ٹیکس کیخلاف ملک بھر کے تاجر آج سے ملک گیر احتجاج کا سلسلہ شروع کریں گے‘ حکومت بینکوں سے لین دین پر عائد ود ہولڈنگ ٹیکس کا فیصلہ فوری واپس اور تاجروںسے مذاکرات کرے‘ زرعی آمدن‘ اسٹاک ایکسچینج سمیت دیگر شعبہ جات کو نیٹ میں لایا جائے حکومت بلا واسطہ کے بجائے راہ راست ٹیکس لگائے ٹیکس کے نظام میں اصطلاحات اور ایف بی آر میں کرپشن کے خاتمے تک ٹیکس نیٹ میں اضافہ ممکن نہیں ہے۔

Tags: