کراچی میں قربانی کی کھالوں کیلئے شہریوں کے گھروں پر جانے پر پابندی

September 7, 2015 3:50 pm0 commentsViews: 63

چرم قربانی جمع کرنے کے حوالے سے کسی کو بھی سڑک کے کنارے یا عوامی مقامات پر کیمپ لگانے کی اجازت نہیں دی جائیگی
عیدالاضحی پر نماز عید کے اجتماعات اور مویشی منڈی میں خریداروں کا تحفظ بھی یقینی بنایا جائے گا‘ ایڈیشنل آئی جی کراچی
کراچی(اسٹاف رپورٹر) پولیس نے قربانی کی کھالوں کیلئے مذہبی اور سیاسی جماعتوں کے کارکنوں کے لوگوں کے گھروں پر جانے پر پابندی لگادی ۔ایڈیشنل آئی جی کراچی مشتاق احمد مہر نے زونل ڈی آئی جیز ،ڈی آئی جی سی آئی اے ، سمیت ضلع ایس ایس پیز کراچی کو ہدایات جاری کی ہیں کہ عید الاضحیٰ کے حوالے سے غیر معمولی سیکیورٹی اقدامات پر مشتمل کنٹی جینسی پلان کی ترتیب اور عمل درآمد کے لئے تمام تر اقدامات کو یقینی بنایا جائے ۔انھوں نے کہا کہ پلان کے تحت مساجد ،امام بارگاہوں ،اور نماز عید کے لئے دیگر کھلے مقامات پر مستعد اور چاک و چوبند پولیس اہلکاروں کی تعیناتی کو یقینی بنایا جائے ۔اور اس ضمن میں مذکورہ مقامات کے منتظمین کی جانب سے مقرر کردہ رضاکاروں کو بھی سیکیورٹی اقدامات کا حصہ بنایا جائے تاکہ باہم تعاون سے مشکوک افراد کی نگرانی کو مزید ٹھوس اور مربوط بنایا جاسکے ۔انھوں نے کہا کہ مویشی منڈیوں میں تاجروں اور قربانی کے جانوروں کے خریداروں کے تحفظ کے لئے تھانہ جات تمام تر اقدامات کو یقینی بناتے ہوئے متعلقہ حدود میں پیٹرولنگ پکٹنگ اور اسنیپ چیکنگ کے عمل کو مزید ٹھوس بنائیں ۔ انھوں نے کہا کہ چرم قربانی کو اکٹھا کرنے کے حوالے سے کسی کو بھی سڑک کے کنارے یا عوامی مقامات پر کیمپ لگانے کی ہر گز اجازت نہ دی جائے اور نہ ہی کسی سیاس مذہبی یا دیگر فلاحی تنظیموں کو یہ اجازت دی جاے کہ وہ چرم قربانی کے سلسلے میں شہریوں کے گھروں پر یادیگر مقامات پر جائیں جبکہ اس حوالے سے کالعدم تنظیموں پر بھی کڑی نگاہ رکھی جائے علاوہ ازیں خلاف ورزی کی صورت میں غیرجانبدارانہ و بلا امتیاز کاروائی کو ہر سطح پر یقینی بنایا جائے۔

Tags: