پاکستان اور بھارت جوہری جنگ کے دہانے پر پہنچ گئے امریکی جریدہ

September 8, 2015 1:57 pm0 commentsViews: 25

دونوں ممالک میں ایٹمی جنگ جنوبی ایشیا کیلئے بربادی لائے گی اور یہ عالمی معیشت سمیت کرہ ارض کیلئے خطرناک ہوگا
دہلی مسئلہ کشمیر اور دیگر معاملات میں غیر ملکی سفارتی کردار سے آنکھیں چراتا ہے مگر ایٹمی ہتھیاروں کا استعمال ساری بساط الٹ دے گا‘ نیوز ویک
نیو یارک ( آن لائن) ایک امریکی جریدے نے اپنی رپورٹ میں دعویٰ کیا ہے کہ پاکستان اور بھارت کے بارے میں خدشہ ہے کہ جنوبی ایشیاء کے دونوں ممالک جوہری جنگ کے دہانے پر پہنچ سکتے ہیں اور اس ممکنہ منظر نامے کے بعد امریکا کی زمینی فوج کا صورت حال سے الگ تھلگ رہنا تقریباًنا ممکن ہوگا۔ ایک ایٹمی تصادم جنوبی ایشیاء کیلئے بربادی لائے گااور خصوصاً عالمی معیشت کے لئے تباہ کن اور کرہ ارض کیلئے انتہائی خطرناک ہوگا۔ بھارت اور پاکستان کے درمیان جنگ کا حقیقی امکان آج بھی موجود ہے۔ امریکی جریدے’’نیوزویک‘‘ کے مطابق 5 لاکھ 50 ہزار جوانوں کے ساتھ پاکستانی فوج عددی حجم کے لحاظ سے اس وقت دنیا میں چوتھے نمبر پر ہے۔ اس فہرست میں 16 لاکھ فوجیوں کے ساتھ چین سرفہرست، 11 لاکھ 50 ہزار کے ساتھ بھارت دوسرے اور 10 لاکھ بیس ہزار کے ساتھ شمالی کوریا کی فوج تیسرے نمبر پر ہے جب کہ امریکا کی فوج 5 لاکھ 39 ہزار 450 جوانوں کے ساتھ پانچویں نمبر پر ہے۔ لیکن حیران کن حقیقت یہ ہے کہ گزشتہ سال دفاعی اخراجات کے لحاظ پاکستان دنیا کے پہلے بیس ممالک کی فہرست میں شامل نہیں۔ جب کہ امریکا دفاعی اخراجات کے لحاظ سے سرفہرست اور بھارت نویں نمبر پر ہے۔ جریدے کے مطابق دونوں ممالک کے درمیان پہلے بھی تین سے چار جنگیں ہو چکی ہیں۔اس میں کارگل جنگ کو بھی شمار کیا جاسکتا ہے۔مستقبل میں جوہری تناز ع نے شدت اختیار کی تو جنگ بندی کیلئے ایک غیر ملکی فوجی کردار کاممکنہ عمل دخل ہوسکتا ہے۔ کشمیر یا متعلقہ معاملات میں کسی بھی غیر ملکی سفارتی کردار سے دہلی آنکھیں چراتا ہے لیکن جوہری ہتھیار وں کا حقیقی استعمال ساری بساط کو الٹ سکتا ہے اور صورت حال ڈرامائی ہو سکتی ہے۔

Tags: