سندھ اسمبلی توڑنے کی تجویز مسترد مراد علی شاہ کو وزیراعلیٰ بنانے پر غور

September 10, 2015 3:45 pm0 commentsViews: 27

پیپلزپارٹی نے سندھ کے رہنمائوں کیخلاف کرپشن میں ملوث ہونے کے شواہد ملنے کے بعد صوبے میں اہم تبدیلیوں کیلئے صلاح و مشورے شروع کردیے
سینئر رہنمائوں نے وفاقی حکومت کو سخت پیغام دینے کے لیے آصف زرداری کو سندھ اسمبلی توڑنے کی تجویز پیش کی تھی، اسمبلی توڑنے کی باتیں کرنے کے بجائے بلدیاتی الیکشن کی تیاری کی جائے، چیئرمین کی ہدایت
دبئی میں آصف زرداری کی زیرصدارت ہونے والے اجلاس میں وزیراعلیٰ سندھ سمیت کئی وزراء کی تبدیلی پر غور ہوا، مراد علی شاہ بلاول بھٹو کے پسندیدہ ہیںاور وہ انہیں صوبے کا وزیراعلیٰ بنانا چاہتے ہں، ذرائع
کراچی( آن لائن/نمائندہ خصوصی) پیپلز پارٹی نے سندھ میں اپنے وزراء اور اہم رہنمائوں کیخلاف سیکورٹی ادارواں کی کارروائیوں اور ان کے خلاف کرپشن کے شواہد ملنے کے بعد صوبے میں اہم تبدیلیوں کیلئے صلاح مشورے کردیئے ہیں‘ قائم علی شاہ کی جگہ مراد علی شاہ کو صوبے کو وزیراعلیٰ بنانے پر بھی غور کیا جارہا ہے جبکہ پیپلز پارٹی‘ سندھ اسمبلی توڑنے کی تجویز مسترد کرتے ہوئے بلدیاتی الیکشن میں بھر پور حصہ لینے کا فیصلہ کیا ہے۔ ذرائع نے بتایا کہ پی پی کے بعض رہنمائوں نے آصف زرداری کو تجویز دی تھی کہ ایم کیو ایم پہلے ہی سندھ اسمبلی سے مستعفی ہوچکی ہے۔ اب پی پی سندھ اسمبلی توڑ دے اور ضمنی الیکشن میں حصہ لے کر وفاقی حکومت کو سخت پیغام دیا جائے مگر آصف علی زرداری نے اس تجویز کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ اس سے پی پی کو ہی نقصان ہوگا اور اگر نگراں حکومت کسی ہنگامی صورتحال کے پیش نظر تین ماہ سے زائد وقت تک رہی تو پھر بلدیاتی الیکشن میں پی پی کو نقصان ہوگا‘ فوری طور پر دوسرے معاملات چھوڑ کر بلدیاتی الیکشن کی تیاری کی جائے‘ اس ہدایت کے بعد وزیراعلیٰ سندھ سے تعلق رکھنے والے پی پی کے ارکان پارلیمنٹ سے صلاح مشورہ تیز کردیئے ہیں اور 12ستمبرکو پی پی سندھ کونسل کا اجلاس بھی وزیراعلیٰ ہائوس میں طلب کرلیا ہے جس میں بلدیاتی الیکشن میں امید واروں کے حوصلے سے اہم فیصلے کئے جائیں گے۔ دوسری جانب پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری کی صدارت میں دبئی میں ہونیوالے اجلاس میں وزیراعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ کی جگہ وزیر خزانہ سید علی شاہ کو وزیراعلیٰ سندھ بنانے پر غور کیا گیا ہے‘ ذرائع کے مطابق چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کی اس فیصلے میں تائید لازمی ہے‘ اسی لئے فریال تالپور گزشتہ روز بلاول ہائوس لاہور پہنچیں اور بلاول سے اس سلسلے میں بات چیت کی‘ سید مراد علی شاہ بلاول کے پسندیدہ ہیں اور وہ انہیں وزیراعلیٰ سندھ بنانے کے خواہشمند ہیں‘ ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیراعلیٰ سندھ کے ساتھ بعض وزراء کی بھی تبدیلی کا امکان ہے‘ جن کیخلاف نیب اور ایف آئی اے بدعنوانیوں کی تحقیقات کررہی ہے۔

Tags: