وزیر اعلیٰ نے جیلوں کی سیکورٹی فول پروف بنانے کا حکم دیدیا

September 12, 2015 1:46 pm0 commentsViews: 18

سندھ کی تمام جیلوں کی سیکورٹی قومی ایکشن پلان کا حصہ ہے جس میں کسی قسم کی غفلت برداشت نہیں کی جائیگی‘ قائم علی شاہ
معمولی جرائم میں ملوث ملزمان کی سزائوں میں دوماہ کی کمی کا اعلان جیل کے دورے پرکچن بھی گئے اور کھانے کی تیاری کے کام کا معائنہ کیا
کراچی( اسٹاف رپورٹر) وزیر اعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ نے متعلقہ حکام کو صوبے بھر کی تمام جیلوں کی سیکورٹی فول پروف بنانے کے احکامات دیتے ہوئے کہا کہ تمام جیلوں کی سیکورٹی قومی ایکشن پلان کا اہم جز ہے۔ اور اس ضمن میں کسی بھی قسم کی غفلت نا قابل برداشت ہوگی۔ یہ بات انہوں نے جمعہ کو سینٹرل جیل کراچی کے دورے کے موقع پر کہی۔ وزیر اعلیٰ سندھ جیل کے کچن گئے اور وہاں قیدیوں کیلئے تیار کئے جانے والے کھانے کا معائنہ کیا اور کھانا خود کھا کر بھی دیکھا۔ انہوں نے جیل کے دیگر حصوں کا بھی تفصیلی دورہ کرکے قیدیوں کو مختلف ہنر کی تربیت اور ان کی سماجی اور اقتصادی بحالی کیلئے کئے جانے والے اقدامات کا بھی جائزہ لیا۔ اس موقع پر بات چیت کرتے ہوئے وزیر اعلیٰ نے کہا کہ دہشت گردی، ٹارگٹ کلنگ اور اغواء برائے تاوان، بھتہ خوری اور دیگر سنگین جرائم میں ملوث مجرموں کے ساتھ کسی قسم کی رعایت نہیں برتی جائے گی، ان مجرموں کو تفتیش اور پراسیکیوشن کے ذریعہ انصاف کے کٹہرے میں لایا جائے گا۔ وزیر اعلیٰ نے معمولی جرائم میں ملوث ایسے قیدی جن کی سزا دو ماہ یا اس سے کم رہ گئی ہے کی سزائوں میں دو ماہ کی کمی کا اعلان بھی کیا تاہم انہوں نے واضح کیا کہ تخفیف انسداد دہشت گردی کی عدالتوں کی جانب سے سزا یافتہ یا دہشت گردی، ٹارگٹ کلنگ، قتل، اغواء، ڈکیتی اور بھتہ خوری میں ملوث قیدیوں کیلئے نہیں ہوگی۔ وزیر اعلیٰ نے جیل حکام کو ان قیدیوں کی فہرست تیار کرکے انہیں پیش کرنے کی ہدایت کی جنہوں نے اپنی سزائیں مکمل کر لی ہیں لیکن معمولی جرمانے کی ادائیگی نہ ہونے کے باعث وہ ابھی تک جیلوں میں ہیں تا کہ سرکار کی طرف سے ان کا جرمانہ جمع کرکے انہیں رہائی دلائی جا سکے۔

Tags: