نادرا میں کریک ڈائون کے باوجود رشوت کا بازار گرم

September 14, 2015 5:05 pm0 commentsViews: 29

نکاح نامہ400 روپے، ب فارم500 روپے، برتھ سرٹیفکیٹ1000 روپے پر بلا تاخیر جاری کیا جاتا ہے
فیملی رجسٹریشن5000 روپے پر فوری تیار،رشوت نہ دینے والے شہری نادرا آفس کے چکر لگانے پر مجبور
کراچی( کامرس رپورٹر) نادرا میں کریک ڈائون اور تبالوں کے باوجود ریجنل دفاتر میں رشوت ستانی کا بازار گرم بیرونی ایجنٹوں کے ذریعے نادرا اہلکار 400 روپے میں کمپیوٹرائزڈ نکاح نامہ فراہم کر دیتے ہیں جبکہ اسکی سرکاری فیس صرف30 روپے ہے اسی طرح کمپیوٹرائزڈ ب فارم کی فیس 100 روپے ہے جو 500 روپے کی عوض فوراً فراہم کر دیا جاتا ہے۔ اسی طرح برتھ سر ٹیفکیٹ کی فیس90 روپے کے مقابلے میں 1000 روپے وصول کرکے بلا تاخیر جاری کیا جاتاہے جبکہ اضافی رقم نہ دینے والے شہریوں کو کئی روز لائن میں کھڑے ہونے اور مختلف دستاویزات ویری فیکیشن کی آڑ میں مہینوں انتظار کرایا جاتا ہے۔ فیملی رجسٹریشن کی مقررہ فیس کی بجائے 5000 روپے میں فوری سرٹیفکیٹ فراہم کر دیا جاتا ہے۔ جبکہ اورنگی ٹائون اور متصل علاقوں کے لوگوں کو تجدیدی شناختی کارڈ کے اجراء میں گزشتہ ڈیڑھ برس سے ریجنل آفس کے چکر لگوائے جا رہے ہیں ان علاقوں کے رہائشی شناختی کارڈ ہولڈرز کو 1980 سے قبل کے تصدیق شدہ ثبوت فراہم کرنے کا مطالبہ کیا جا رہا ہے۔ خصوصاً بزرگ خواتین سے ان کے والدین کا شناختی کارڈ مانگا جا رہا ہے۔

Tags: