بلدیاتی الیکشن سے قبل پیپلزپارٹی کیلئے خطرے کی گھنٹی بج گئی

September 14, 2015 5:11 pm0 commentsViews: 184

ٹھٹھہ میں پیپلزپارٹی کے سیکڑوں کارکنان نے مسلم لیگ (ن) میں شمولیت اختیار کر لی
پیپلزپارٹی نے8 سال میں سندھ کو برباد اور حد سے زیادہ کرپشن کی، اعجاز شیرازی
ٹھٹھہ( نیوز ڈیسک) بلدیاتی الیکشن سے قبل ہی پیپلز پارٹی کیلئے خطرے کی گھنٹی بج گئی‘ پارٹی کے کئی سرکردہ رہنمائوں اور سینئر کارکنوں کی مسلم لیگ میں شمولیت‘ (ن) لیگ کی پوزیشن مستحکم نظر آنے لگی‘ تفصیلات کے مطابق ٹھٹھہ ضلع میں بلدیاتی الیکشن سے قبل ہی پیپلز پارٹی کیلئے خطرے کی گھنٹی بج گئی‘ ضلع کے علاقے یونین کونسل اداسی کے پیپلز پارٹی کے جنرل سیکریٹری ودیرہ قائم خان انڑ‘ پیپلز پارٹی یوسی کرم پور اور گھارو کے سرکردہ رہنما محمد قاسم چانڈیو‘ گھوڑا باری کے محمد عمر شورو‘ گھارو دھابے جی اور پیپلز پارٹی کے امیر خان چانڈیو نے اپنے دوستوں اور برادریوں سمیت مسلم لیگ (ن) کے ایم پی اے سید اعجاز علی شاہ سے ملاقات کے دوران پیپلزپارٹی چھوڑ کر مسلم لیگ (ن) میں شمولیت کا اعلان کردیا جبکہ چند روز قبل جام گھرام خان جوکھیو نے بھی برادری سمیت (ن) لیگ میں شمولیت اختیار کرلی تھی‘ اس صورتحال کے پیش نظر مسلم لیگ (ن) کی پوزیشن بلدیاتی الیکشن میں مضبوط ہوتی جارہی ہے‘ اعجاز علی شیرازی نے صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ8برس کے اندر پیپلز پارٹی نے سندھ کو تباہ و برباد کردیا اور سب سے زیادہ کرپشن کی‘ انہوں نے کہا کہ غریب عوام کو دھونس اور دھمکیوں سے ڈرایا گیا ۔

Tags: