رینجرز اور ایجنسیاں پنجاب میں بھی کرپشن کیخلاف کارروائی کریں‘ عمران خان

September 15, 2015 1:41 pm0 commentsViews: 22

آرمی چیف کا گراف بڑھنے کا سبب قوم کا چوروں سے تنگ آنا ہے‘ میٹرو بس اور نندی پور منصوبے کا آڈٹ کرایا جائے
آصف زرداری اور ایم کیو ایم فوج کو پیچھے ہٹانے کیلئے نواز شریف پر دبائو ڈال رہے ہیں‘ پریس کانفرنس
اسلام آباد/لاہور(نیوز ایجنسیاں)تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے کہ جمہوریت کی آڑ میں ملک کو لوٹا جارہا ہے، ملک کے دس کروڑ عوام بھوک سے مر رہے ہیں۔ حکمران دبئی میں اجلاس کررہے ہیں۔ گزشتہ روز اسلام آباد میں اپنی رہائش گاہ بنی گالہ میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے انہوں نے مزید کہا کہ آرمی چیف جنرل راحیل شریف کا گراف بڑھنے کا سبب قوم کا چوروں سے تنگ آنا ہے اور لگتا ہے کہ جنرل راحیل شریف پیچھے نہیں ہٹیں گے۔ جبکہ سابق صدر آصف علی زرداری اور ایم کیو ایم فوج کو پیچھے ہٹانے کے لیے نواز شریف پر دبائو ڈال رہے ہیں۔ پاک فوج کی مکمل حمایت کرتے ہیں اور نیشنل ایکشن پلان کے حامی ہیں۔ سندھ کے لوگ آپریشن سے خوش ہیں اور ایم کیو ایم کی ناکام ہڑتال اس کا ثبوت ہے۔ عمران خان نے پیپلزپارٹی اور ن لیگ کے درمیان مفاہمتی سیاست کے خاتمے کو ملک کے لیے خوش آئند قرار دیا۔ انہوں نے کہا کہ مک مکا ٹوٹنے پر پیپلزپارٹی کو نندی پور منصوبہ یاد آگیا۔ نندی پور پاور پراجیکٹ کا تھرڈ پارٹی آڈٹ کرایاجائے اور ایل این جی کے معاہدوں اور میٹرو پراجیکٹ کا بھی آڈٹ ہونا چاہیے۔ پنجاب میں دیگر میگا پراجیکٹس میں بھی گھپلے ہوئے ہیں۔ بڑے بڑے ڈاکے بھی ڈالے جارہے ہیں۔ لہٰذاپنجاب میںبھی رینجرز اور ایجنسیاں آپریشن کریں۔ انہوں نے اعلان کیا کہ 4 اکتوبر کو اسلام آباد میں بڑا جلسہ کروں گا۔ دھرنا نہیں احتجاج کیاجائے گا۔ صوبائی الیکشن کمشنرز نہ گئے تو پھر تحریک انصاف کو ہرایا جائے گا۔ نگراں وزیراعلیٰ پنجاب فیل ہوگیا تو اسے پی سی بی کا چیئرمین بنادیا گیا۔ نجم سیٹھی کو سزا ملنی چاہیے تھی۔ یہ کہاں کا انصاف ہے کہ لوگ حکم امتناعی کے پیچھے چھپ رہے ہیں۔ عمران خان نے کہا کہ سابق وزیر ضیاء آفریدی کی باتوں پر دکھ ہوا۔ انہیں پہلے اپنے اوپر لگنے والے الزامات کو غلط ثابت کرنا چاہیے تھا لیکن انہوں نے بھی پیپلزپارٹی اور ن لیگ والا کام کیا۔ بلیک میلنگ نہیں چلے گی۔ آئندہ کسی رکن کے عزیز کو ٹکٹ نہیں ملے گا۔ اب تمام تر وجہ پارٹی ڈسپلن پر ہوگی۔ چاہے حکومت ہی کیوں نہ چلی جائے۔ پارٹی کو نقصان پہنچانے والوں کو شوکاز نوٹس جاری کردیے ہیں۔ جبکہ ضیاء آفریدی سمیت بلدیاتی انتخابات میں مخالفین کو ووٹ دینے والے 57 ارکان کو پارٹی سے نکال رہے ہیں اور اعظم سواتی کا فیصلہ آئندہ 2 روز میں کریں گے۔

Tags: