ملیر میں لیاری گینگ وار کارندوں کا دستی بم حملہ سیلز مین جاں بحق

September 15, 2015 1:42 pm0 commentsViews: 24

موٹر سائیکل سوار گینگ وار کارندے موبائل فون کی دکان کے باہر بم پھینک کر فرار ہوگئے جس سے علاقے میں خوف پھیل گیا
بم حملے میں خاتون سمیت تین افرادزخمی ہوئے‘ ایک دم توڑ گیا مقتول موبائل کمپنی کا سیلزمین تھا بھتہ نہ دینے پر حملہ کیا گیا
کراچی(اسٹاف رپورٹر)ملیر کے علاقے دائو دگوٹھ میں لیاری گینگ وار کے کارندوں نے دستی بم سے حملہ کر دیا جس کے نتیجے میں سیلز مین جاں بحق اور خاتون سمیت2افرادزخمی ہوگئے ۔ تفصیلات کے مطابق ملیر سٹی کے علاقے دائود گوٹھ نزد بکرا پیڑی روڈ پر قائم الحسیب کمیونیکشن کی دکان کے باہر موٹرسائیکل سوار لیاری گینگ وار کے کارندوں نے دستی بم سے حملہ کردیا اور فرار ہوگئے ،دستی بم پھٹنے سے خاتون سمیت3افراد زخمی ہوگئے ،جبکہ علاقے میں خوف وہراس پھیل گیا ،پولیس اور رینجرز نے موقع پر پہنچ کر زخمیوں کو جناح اسپتال منتقل کیا جہاںزخموںکو تاب نہ لاتے ہوئے سیلز مین 32سالہ جہانزیب خان ولد محمد شعیب خان توڑ گیا ،جبکہ مریم زوجہ فاروق اور دکان کا مالک منیر کو طبی امداد دی جارہی ہے ،ایس ایچ او حاجی اسحاق کے مطابق مقتول جہانزیب خان کھوکھر آباد کا رہائشی تھا اور ایک موبائل کمپنی کا سیلز مین تھا اس دکان میں کارڈ فروخت کرنے آیا تھا ،انہوں نے بتایاکہ دستی بم لیاری گینگ وار کے کارندوں نے بھتے کی تنازعے پر کیا تھا تاہم پولیس مزید تفتیش کررہی ہے ،جبکہ بم ڈسپوزل اسکواڈ کے عملے کے مطابق مذکورہ بم دیسی ساختہ تھا ۔

Tags: