سانحہ بلدیہ متحدہ کے رہنما سمیت 3 ملزمان کے پاسپورٹ منسوخ کرنیکی کارروائی شروع

September 16, 2015 3:47 pm0 commentsViews: 45

ایس پی بلدیہ ٹائون نے ڈائریکٹر جنرل پاسپورٹ کو خط لکھ کر تینوں ملزمان کے پاسپورٹ منسوخ کرنے کی سفارش کی ہے
انسداد دہشت گردی کی عدالت نے متحدہ رہنما کو سندھ محبت ریلی پر فائرنگ کے مقدمے میں اشتہاری ملزم قرار دے دیا
کراچی( مانیٹرنگ ڈیسک) سانحہ بلدیہ فیکٹری کیس میں ایس پی بلدیہ ٹائون کی جانب سے3 اہم ملزمان متحدہ قومی موومنٹ کے رہنما حماد صدیقی، کارکن عبدالرحمن عرف بھولا اور ایم زبیر کے پاسپورٹ منسوخ کرنے کی سفارش کی گئی ہے۔ نجی ٹی وی کے مطابق ایس پی بلدیہ ٹائون نے سانحہ بلدیہ ٹائون کے سلسلے میں ڈائریکٹر جنرل پاسپورٹ کو خط لکھا ہے کہ مذکورہ تینوں ملزمان بیرون ملک مقیم ہیں۔ اس لئے ان کے پاسپورٹ منسوخ کئے جائیں۔ ذرائع کے مطابق اس درخواست کے بعد تینوں ملزمان کے پاسپورٹ منسوخ کرنے کی کارروائی شروع کر دی گئی ہے۔ دوسری جانب انسداد دہشت گردی عدالت نے حماد صدیقی کو سندھ محبت ریلی پر فائرنگ کے مقدمہ میں اشتہاری ملزم قرار دے دیا، کراچی کی انسداد دہشت گردی عدالت میں سندھ محبت ریلی پر فائرنگ کیس کی سماعت ہوئی۔ انسداد دہشت گردی کی عدالت نمبر3 کے جج سلیم رضا بلوچ نے مقدمہ کی سماعت کی۔ اس دوران تفتیشی افسر نے عدالت کو بتایا کہ مقدمہ کے گرفتار ملزم عامر عرف سر پھٹا نے حماد صدیقی کی ایماء پر دیگر ملزمان کے ہمراہ جرم انجام دیا جس کا وہ اعتراف کر چکا ہے۔ عدالت نے ملزم کی گرفتاری کے احکامات جاری کرتے ہوئے آئندہ سماعت6 اکتوبر تک ملتوی کر دی۔ واضح رہے کہ حماد صدیقی ایم کیو ایم کی تنظیمی کمیٹی کے سابق سربرا ہ ہیں۔ قبل ازیں 11 اگست 2015ء کو انسداد دہشت گردی عدالت نے اسی کیس میں حماد صدیقی سمیت6 دیگر افراد کے نا قابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کئے تھے۔

Tags: