قربانی کے جانوروں کو اداکاروں کے نام دینا درست نہیں، مفتی نعیم

September 16, 2015 3:53 pm0 commentsViews: 37

ایسے لوگوں کو اپنے ایمان کی فکر ہونی چاہیے، سنت ابراہیمی کو نمود و نمائش بنانا قابل مذمت ہے
کراچی( اسٹاف رپورٹر) جامعہ بنوریہ عالمیہ کے مہتمم مفتی محمدنعیم نے ان خبروں پر انتہائی افسوس کا اظہار کیا جس کے مطابق کچھ تاجروں نے قربانی کے جانوروں کی فروخت میں عوام کی کشش اور زیادہ سے زیادہ کمائی کیلئے ماڈلز اور اداکاروں کے نام رکھے ہوئے ہیں۔ قربانی سنت ابراہیمی اور ایک مکمل عبادت ہے جس کو نمود ونمائش اور مذاق بنانے والے قابل مذمت ہیں ایسے لوگوں کو اپنے ایمان کی فکرکرنی چاہیے۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے منگل کو جامعہ بنوریہ عالمیہ میں تاجر نمائندوں سے ملاقات کے دوران کیا ، اس موقع پر پر تاجروں نے مفتی محمد نعیم کو اپنے مسائل سے آگاہ کیا قربانی کے جانوروں کے حوالے سے شرعی احکام معلوم کیے اس موقع پر مفتی محمدنعیم نے کہاکہ قربانی سنت ابراھیمی کے ساتھ سرکار دوجہاں ﷺکی سنت اور ایک مکمل عبادت ہے اس کی ادائیگی ہر صاحب نصاب پر اسی طرح واجب ہے جس طرح دوسری واجب عبادات ہیںاور کسی بھی عبادت میں نمودو نمائش اللہ تعالیٰ کو بالکل پسند نہیں۔ انہوں نے کہا کہ مذموم فعل میں ملوث افراد کو اپنے ایمان کی فکر کرنی چاہئے اور خریداروں کو بھی اس سے اجتناب کرنا چاہئے۔