خواتین کا موٹر سائیکل چلانا برا نہیں‘ یہ آزاد خیالی ہے شہریوں کی مختلف آراء

September 16, 2015 3:58 pm0 commentsViews: 41

ہمارے معاشرے میں خواتین موٹر سائیکل چلانے کے بعد مردوں کی طرح لباس بھی پہننے لگیں گی‘ پروفیسر فصیح الرحمن
اصل شرم و حیا نگاہوں اور سوچ کی ہوتی ہے‘ خواتین کیلئے موٹر سائیکل کے لائسنس جاری کرنے کا فیصلہ اچھا اقدام ہے
کراچی( نیوز دیسک) ڈی آئی جی ٹریفک کی جانب سے خواتین کو باقاعدہ طور پر موٹر سائیکل چلانے کے لائسنس کے اجراء پر عوام الناس کا ملا جلا رد عمل سامنے آیا ہے‘ مذہبی حلقوں نے اس کو یکسر مسترد تاہم اکثریت نے اچھا اقدام قرار دیا ہے‘ اسلامک آئیڈیا لوجی کے پروفیسر ڈاکٹر فصیح الرحمن نے بتایا کہ ہمارے معاشرے میںخواتین موٹر سائیکل چلانے سے باقاعدہ طور پر مردوں کے لباس بھی اختیار کرلیں گی‘ جو کہ پوش علاقوں میں اکثریت خواتین میں نظر آتا ہے جس سے بے حیائی کا عنصر واضح طور پر محسوس کیا جاسکتا ہے۔

Tags: