تعلیم یافتہ نوجوان اردو بولنے والے غیر ملکی تنظیموں میں شامل ہونے لگے

September 18, 2015 4:26 pm0 commentsViews: 29

کراچی( اسٹاف رپورٹر) نیشنل کرائسز مینجمنٹ سیل کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ غیر ملکی دہشت گرد تنظیمیں سوشل میڈیا اور انٹرنیٹ کے ذریعے کراچی کے پڑھے لکھے اردو بولنے والے نوجوانوں کو اپنے ساتھ شامل کررہی ہیں‘ جنہیں دہشت گردی کیلئے استعمال کیا جاتا ہے رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ایسے دہشت گرد جن میں عمر عرف جاوید‘ علی رحمن عرف طونا‘طیب وغیرہ شامل ہیں بڑی کارروائی کرنے پر یقین رکھتے ہیں‘ جیسے سانحہ صفورا گوٹھ‘ سبین محمود قتل اورڈاکٹر دیبر الوبو پر حملہ شامل ہیں۔

Tags: