والدین آئندہ ماہ اسکول فیس ادا نہ کریں، حلیم عادل شیخ

September 18, 2015 4:52 pm0 commentsViews: 24

حکومت نے نجی اسکولوں کے معاملات ٹھیک نہیں کیے تو اکتوبر سے احتجاجی تحریک چلائیں گے
کراچی( اسٹاف رپورٹر) پاکستان مسلم لیگ (ق) سندھ کے صدر حلیم عادل شیخ نے سندھ کے نظام تعلیم کی تباہی کا ذمہ دار وزارت تعلیم کو قرار دیا ہے جس کی عدم توجہ کے باعث پرائیویٹ اسکولوں کی انتظامیہ بے لگام گھوڑا بن چکی ہے اور مافیا کی شکل اختیار کرچکی ہے اور نجی اسکولوں میں من مانی فیسیں وصول کی جارہی ہیں‘ انہوں نے حکومت کو متنبہ کرتے ہوئے کہا کہ اگر حکومت نے اگلے ماہ تک محکمہ تعلیم اور پرائیویٹ اسکولوں کے معاملات درست نہ کئے اور اسکولز مافیا کو لگام نہ دی تو یکم اکتوبر سے احتجاجی مظاہروں کا سلسلہ شروع کیا جائیگا‘ انہوں نے بچوں کے والدین سے اپیل کی کہ وہ اگلے ماہ کی اسکول فیس ادا نہ کریں۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے جمعرات کو کراچی پریس کلب میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر بانو صغیر صدیقی‘ بابر انیس‘ کامران ہارون انصاری‘ ماہ گل غفور و دیگر بھی موجود تھے‘ حلیم عادل شیخ نے کہا کہ حکومت پرائیویٹ اسکولوں کی مانیٹرنگ کیلئے اور تعلیمی نظام کو تباہی سے بچانے کیلئے ٹاسک فورس بنائے جس میں میڈیا کے نمائندوں ‘اسکول ٹیچروں‘ والدین اور سول سوسائٹی کے لوگوں کو شامل کیا جائے۔