ایدھی سردخانے میں غسل کے دوران مردہ خاتون اٹھی بیٹھی

September 22, 2015 1:32 pm0 commentsViews: 197

غسل دینے والی خاتون چیخ مار کر باہر کی جانب بھاگی، لوگوں میں بھگدڑ اور خوف وہراس
غسل کی تیاری کے دوران منظوراں کی دل کی دھڑکن محسوس ہوئی اور اچانک زندہ ہوگئی، بچے کی آوازیں نکالنے لگی
منظوراں مائی کی تعزیت اور جناے کیلئے گھر پر لوگ جمع تھے، ڈاکٹر کے بجائے ایک شخص نے اس کی موت کی تصدیق کی تھی
کراچی(اسٹاف رپورٹر)ایدھی سردخانے میں مردہ قرار دی جانے والی خاتون غسل کے دوران اٹھ بیٹھی ،جس کے باعث ایدھی سرد خانے میں خوف وہراس پھیل گیا اور بھگدڑ مچ گئی ۔تفصیلات کے مطابق میمن گوٹھ کے علاقے دنبہ گوٹھ کی رہائشی خاتون منظوراںمائی کے اہلخانہ نے غفلت کا مظاہرہ کرتے ہوئے مردہ قرار دے دیا اور لاش کو ایدھی سرد خانے منتقل کر دی ،ایدھی سینٹرمیں مردے کا غسل دینے والی خاتون منظورا مائی کوغسل دیں رہی تھی کہ اس ہی دوران منظورا مائی اٹھ بیٹھی ،جس سے مردہ غسل دینے والی خاتون چیخ مار کر باہر کی جانب بھاگی انکو دیکھ مزید افراد میں بھی بھگدڑ مچ گئی جبکہ ایدھی سرد خانے میںخوف وہراس پھیل گیا ،ایدھی ذرائع کے مطابق یہ منظر دیکھ کر وہاں موجود لوگ حیران و پریشان ہوگئے،غسل دینے والی خاتون نے عملے کو بتایاکہ جب میں نے خاتون کے سینے پر ہاتھ رکھا تو دھڑکن چلتی محسوس ہوئی تھی ،ایدھی فائونڈیشن کے عملے نے بتایاکہ اس واقعہ کے بعد منظوراں کا سیدھا ہاتھ پکڑا تو جھٹکا لگا، کلمہ پڑھایا تو منظوراں نے مرحبا یا مصطفیٰ پکارنا شروع کردیا،ایدھی سینٹر کے ذرائع کے مطابق منظورا مائی کاآبائی تعلق مظفرگڑھ سے ہے اور یہ اپنے رشتے داروں کے گھر دنبہ گوٹھ آئی ہوئی تھی جہاں گرمی کے باعث انکی حالت غیر ہوگئی اور یہ بالکل بہوش ہوگئی جس پر انکے رشتے داروں نے خاتون کو مردہ قرار دے دیا اور میت ایدھی سردخانے رکھوا کر چلے گئے ،تاہم غسل کی تیاری آخری مراحل میں تھی کہ مردہ منظوراں اچانک زندہ ہوگئی اور بچے کی آوازیں نکالنے لگی، منظورہ بی بی کے گھر تعزیت اور جنازے میں شرکت کیلئے کثیر تعداد میں لوگ بھی جمع ہوگئے تھے ، خاتون کے شوہر کے مطابق خاتون کی رات کو طبیعت خراب تھی، صبح4بجے یہی لگا کہ وہ انتقال کر گئی ہیں کیونکہ جسم بالکل ٹھنڈا پڑ چکا تھا، انہوں نے بتایا کہ علاقے میں کوئی ڈاکٹر نہیں ، ایک مقامی معزز شخص نے موت کی تصدیق کی،دوسری جانب اہل خانہ نے بھی دعویٰ کیا ہے کہ خاتون میں بچے کی روح آ گئی ہے، جس کی بنا ء پروہ بچے کی آوازیں نکال رہی ہے۔

Tags: