کراچی میں بین الاقوامی بھتہ خور کی گرفتاری کھٹائی کا شکار

September 23, 2015 3:14 pm0 commentsViews: 34

انویسٹی گیشن یونٹ نے بھتہ خوری کے اہم کردار2 بھائیوں کی گرفتاری کیلئے وفاقی اداروں سے مدد مانگ لی
ایک ملزم سائوتھ افریقہ اور دوسرا دبئی سے بھتہ خوری کرتا ہے، آئی جی کی عدم دلچسپی کے باعث پیشرفت نہیں ہو سکی
کراچی(اسٹاف رپورٹر)کراچی میں بین الاقوامی بھتہ خوروں کی گرفتاری کا معاملہ کھٹائی میں پڑ گیا۔ کراچی میں ڈاکٹرز اور پروفیسرز سے سائوتھ افریقہ اور دبئی سے بھتہ طلب کرنے والے بھتہ خوروں کا گروپ توبے نقاب ہوگیا اور اسپیشل انویسٹی گیشن یونٹ نے ملک سے فرار ملزمان کا بھی سراغ لگا لیا لیکن بھتہ خور گروپ کے اہم کردار دو سگے بھائیوں کی گرفتاری کا معاملہ کھٹائی میں پڑ گیا۔ اسپیشل انویسٹی گیشن یونٹ نے حافظ فرقان اور حافظ اصغر کی گرفتاری کے لیے وفاقی اداروں سے مدد مانگ لی ہے۔ حافظ فرقان سائوتھ افریقہ اور حافظ اصغر دبئی سے بھتہ خوری کرتا ہے۔ تفتیشی ذرائع کے مطابق آئی جی سندھ غلام حیدر جمالی کی عدم دلچسپی کے باعث گرفتاری میں پیشرفت نہیں ہوسکی۔ آئی جی کو بھتہ خوروں کی گرفتاری سے متعلق خط لکھا گیا، مگر ان کی جانب سے خاطر خواہ جواب نہیں ملا۔ بین الاقوامی بھتہ خور گروپ کے تین کارندے گرفتار ہوچکے ہیں، جنہوں نے بین الاقوامی بھتہ خور گروپ کا مکمل ڈھانچا بے نقاب کردیا۔ان ملزما ن انکشاف کیا ہے کہ وہ ڈاکٹرز اور پروفیسرز سے بھتہ لے کر سائوتھ افریقہ پہنچاتے تھے۔

Tags: