شہر بھر میں سڑکوں پر غیر قانونی مویشی منڈیوں سے بدترین ٹریفک جام

September 24, 2015 2:02 pm0 commentsViews: 44

پولیس اہلکار عیدی مہم میں مصروف‘ قربانی کے جانور لے جانے والی گاڑیوں سے 50 روپے تک وصول کئے جارہے ہیں
ایم اے جناح روڈ‘ شارع فیصل‘ زیب النساء اسٹریٹ اور دیگر شاہراہوں پر شہری گھنٹوں پھنسے رہتے ہیں
کراچی( اسٹاف رپورٹر) سڑکوں پر لگنے والی غیر قانونی مویشی منڈیوں کے باعث مختلف علاقوں میں بد ترین ٹریفک جام ہونے سے ٹریفک کا نظام درہم برہم ہوگیا جبکہ پولیس اہلکار عیدی مہم میں مصروف ہیں۔ عید الاضحی سے قبل ہی ٹریفک پولیس کی نا اہلی سامنے آگئی۔ اہم شاہراہوں پر سگنل بند اور ٹریفک پولیس غائب ہونے سے شہریوں کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ تفصیلات کے مطابق عید الاضحی کے موقع پر ٹریفک پولیس حکام کی جانب سے بلند و بانگ دعوے کئے گئے تھے شہر میں ٹریفک کے دبائو کے پیش نظر بہتر اقدامات کئے گئے ہیں تاہم عید سے قبل ہی شہر کی اہم ترین شاہراہوں پر بدھ کی شام سے ہی ٹریفک جام ہونے لگا اور ایم اے جناح روڈ سمیت دیگر اہم سڑکوں پر ٹریفک سگنل کی بندش کے ساتھ اہلکاروں کی عدم موجودگی کی وجہ سے ٹریفک کا نظام درہم برہم ہوگیا۔ بدھ کی شب ایم اے جناح روڈ، شارع قائدین، نیو ایم اے جناح روڈ، یونیورسٹی روڈ، شارع فیصل، بزنس ریکارڈ روڈ، ایم اے جناح روڈ، پریڈی اسٹریٹ، زیب النساء اسٹریٹ، کوریڈور 3 ، سر شاہ سلیمان روڈ، راشد منہاس روڈ سمیت دیگر سڑکوں پر بد ترین ٹریفک جام رہا جس کی وجہ سے ہزاروں گاڑیوں میں سوار شہری گھنٹوں مختلف سڑکوں پر پھنسے بے بسی کی تصویر بنے رہے جبکہ ایمبولینس سروس بھی شدید متاثر ہوئی۔ منڈیوں کے اطراف ٹریفک کی روانی بحال رکھنے کے بجائے اہلکار سڑک کے کنارے کھڑے ہو کر جانور لے جانے والی گاڑیوں سے فی جانور20 روپے سے50 روپے وصول کر رہے ہیں اور اسی طرح علاقہ پولیس کے اہلکار اسٹریٹ کرمنل، ڈکیت اور دہشت گردوں پر نگاہ رکھنے کے بجائے سڑک کے کنارے موبائل کھڑی کرکے اسنیپ چیکنگ کے نام پر شہریوں اور جانوروں کی گاڑیوں سے 50 روپے عیدی طلب کر رہے ہیں۔

Tags: