کے الیکٹرک کے آڈٹ افسران میں کھلبلی مچ گئی کئی فرار ہونے لگے

September 24, 2015 2:12 pm0 commentsViews: 32

آڈیٹر جنرل پاکستان نے کراچی میں بجلی کی تقسیم کار کمپنی کی آمدنی اور اخراجات کا حساب مانگ لیا
سالانہ بجلی کی پیداوار فرنس آئل اور گیس کے اخراجات سے متعلق رپورٹ وزیراعظم کو پیش کی جائے گی
کراچی( اسٹاف رپورٹر) وفاقی حکومت کے احکام پر آڈیٹر جنرل آف پاکستان ( اے جی پی) نے کے الیکٹرک کے آڈٹ کا آغاز کر دیا ہے جس کی رپورٹ وزیر اعظم کو پیش کی جائے گی۔ آڈٹ سالانہ بجلی کی پیداوار، فرنس آئل اور گیس اخراجات سے متعلق رپورٹ تیار کی جائے گی۔ رپورٹ کی تیاری کے معاملے پر کے الیکٹرک انتظامیہ میں کھلبلی مچ گئی ہے۔ اعلیٰ افسران بیرون ملک جانے ( مبینہ طور پر فرار) کی تیاری کر رہے ہیں۔تفصیلات کے مطابق وفاقی حکومت کے حکم پر آڈیٹر جنرل آف پاکستان نے کراچی میں بجلی کی تقسیم کار نجی کمپنی کے الیکٹرک کی آمدنی و اخراجات کا آڈٹ شروع کر دیا ہے۔ ذرائع نے بتایا کہ اے جی پی کی ٹیم کے الیکٹرک میں سالانہ بجلی کی پیداوار، فرنس آئل، گیس اور نیشنل گرڈ اسٹیشن سے خریدی کی گئی بجلی کی خریداری، آمدنی و دیگر اخراجات کا آڈٹ کرکے رپورٹ مرتب کرے گی۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ آڈٹ رپورٹ میں کراچی کے بجلی صارفین سے بوگس بلنگ کی مد میں ہونے والی اربوں روپے کی رقم پکڑے جانے کا امکان ہے۔ ذرائع نے مزید بتایا کہ آڈیٹر جنرل آف پاکستان کی جانب سے کے الیکٹرک کا پہلی بار آڈٹ کیا جا رہا ہے۔ اس سے قبل 2014ء میں اے جی پی کی ٹیم کراچی میں ڈیفنس کے علاقے سن سیٹ بلیو وارڈ میں واقع کے الیکٹرک کے ہیڈ آفس میں آڈٹ کیلئے گئی تھی تاہم اے جی پی کی ٹیم کو کسی قسم کا ریکارڈ فراہم نہیں کیا گیا۔

Tags: