کوئی مقدس گائے نہیں ہے ملک میں احتساب کرنیوالوں کا احتساب بھی ہونا چاہیے، رضا ربانی

October 1, 2015 3:24 pm0 commentsViews: 45

سول اور ملٹری بیورو کریسی میں کوئی بھی صاف و شفاف نہیں ہے، احتساب بلا تفریق ہونا چاہیے
آج ملک میں جو بھی لنگڑلی لولی جمہوریت ہے وہ سیاسی کارکنوں کی جدوجہد کا نتیجہ ہے
کرپشن کا خاتمہ قانون کے دائرے میں رہتے ہوئے کرنے کی ضرورت ہے، کراچی میں مباحثے سے خطاب
کراچی( اسٹاف رپورٹر) چیئر مین سینیٹ میاں رضا ربانی نے کہا ہے کہ نیب کے قانون کو دیکھنے کی ضرورت ہے۔ لوگوں کا احتساب کرنے والوں کا احتساب کون کرے گا۔ کوئی مقدس گائے نہیں سب کا احتساب ہونا چاہئے۔ سول اور ملٹری بیورو کریسی کوئی بھی صاف و شفاف نہیں۔ احتساب بلا تفریق ہونا چاہئے۔ احتساب صرف سیاستدانوں کا ہی نہیں بلکہ بیوروکریٹس، ملٹری، نیب سمیت دیگر تمام با اثر لوگوں کا بھی احتساب ہونا چاہئے۔ سیاستدانوں اور کارکنوں نے بھی کرپشن کی ہے میں ان کا دفاع نہیں کرتا۔ سیاستدانوں نے کرپشن کی ہے تو باقی پاکستان بھی صاف و شفاف نہیں۔ ماضی کی غلطیوں کو نہ دہرایا جائے۔ اب یہ نہیں چلے گا کہ سیاسی سوچ رکھنے والوں کیلئے اسپیشل کورٹس بنائی جائیں۔ اسپیشل کورٹس ضرور بنائی جائیں میں ساتھ کھڑا ہوں گا پھر احتساب سب کیلئے ہونا چاہئے۔ آج ملک میں جو بھی لنگڑی لولی جمہوریت ہے وہ سیاسی کارکنوں کی جدوجہد کا نتیجہ ہے۔ میں تسلیم کرتا ہوں کہ میری پارٹی میں بھی کرپٹ لوگ موجود ہیں۔ کرپشن کا خاتمہ قانون کے دائرے میں رہ کر کرنے کی ضرورت ہے۔ ایک قومی کمیشن بنایا جائے جو پاکستان کی صحیح تاریخ مرتب کرے جسے نصاب تعلیم میں شامل کیا جائے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے بدھ کو وفاقی اردو یونیورسٹی میں قومی رہنما فتحیاب علی خان کی یاد میں ’’ہم نے روشن کئے ذہنوں میں چراغ‘‘ کے موضوع پر ہونے والے مباحثے میں بحیثیت مہمان خصوصی خطاب اور بعد ازاں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔

Tags: