محکمہ اینٹی کرپشن کے KMC کے دفاتر پر تابڑ توڑ چھاپے ریکارڈ تحویل میں لے لیا

October 1, 2015 3:31 pm0 commentsViews: 36

سوک سینٹر میں سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کے دفتر میں کارروائی کے دوران ڈائریکٹر جنرل اور عملے سے پوچھ گچھ
محکمہ موٹر وہیکل رجسٹریشن کا کرپٹ افسر موقع سے فرار‘ چھاپوں کے باعث اکثر سرکاری افسران نے اپنے موبائل فون بند کردیئے
کراچی( کرائم رپورٹر) محکمہ اینٹی کرپشن نے سوک سینٹر میں قائم کے ایم سی کے دفاتر پر تابڑ توڑ چھاپے مار کر ریکارڈ تحویل میں لے لیا ہے جبکہ ڈی سی سینٹرل کے احاطے میں قائم سب رجسٹرار آفس سے بھی ریکارڈ تحویل میں لیا گیا ہے۔ محکمہ اینٹی کرپشن نے سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کے دفتر پر چھاپہ مارکر زمینوں میں خرد وبرد اور کرپشن کے حوالے سے ریکارڈ طلب کرلیا۔ محکمہ اینٹی کرپشن کے حکام نے سوک سینٹر میں قائم سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کے دفتر پر کارروائی کے دوران ڈائریکٹر جنرل ممتاز حیدر اور عملے سے پوچھ گچھ کی۔ اینٹی کرپشن حکام نے گلستان جوہر میں زمینوں سے متعلق فائلیں بھی اپنی تحویل میں لیں جبکہ گلستان جوہر میں کہاں کہاں چائنہ کٹنگ اور زمینوں میں خردو برد کی گئی اس حوالے سے بھی عملے سے پوچھ گچھ کی۔ ڈی جی ممتاز حیدر سے سابق ڈی جی منظور قادرکاکا کے حوالے سے بھی استفسارکیاگیا۔ محکمہ اینٹی کرپشن نے سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کے دفتر پر چھاپہ مارنے کے بعد محکمہ موٹر وہیکل رجسٹریشن اور ورکس اینڈ سروسز کے دفتر پر بھی چھاپے مارے ہیں۔ محکمہ اینٹی کرپشن کو موٹر وہیکل رجسٹریشن کے دفتر سے متعلق کرپشن کی شکایات موصول ہوئی تھیں۔ اینٹی کرپشن نے کرپٹ افسران کو گرفتار کرنے کی کوشش کی تو وہ موقع سے فرار ہوگئے، بعد ازاں چارجڈ پارکنگ کی بھی تفصیلات کا ریکارڈ تحویل میں لے لیا گیا۔ دریں اثناء محکمہ ورکس اینڈ سروسز کے بلڈنگ ڈپارٹمنٹ میں چھاپہ مار کر ریکارڈ قبضہ میں لیا۔ ان چھاپوں کے دوران سوک سینٹر کے سرکاری ملازمین دفاتر سے فرار ہوگئے اور50 فیصد دفاتر خالی ہوگئے۔ اکثر سرکاری ملازمین نے تو اپنے موبائل فون بھی بند کر دئیے جو اعلیٰ افسران دفاتر میں تھے وہ تو بیٹھے رہے لیکن جو دفاتر آنے والے تھے وہ دفاتر میں نہیں آئے اور واپس چلے گئے۔

Tags: