شہر میں چارجڈ پارکنگ فیس کے نام پر 20سے100 روپے تک کی وصولی

October 2, 2015 12:54 pm0 commentsViews: 30

متعدد مقامات پر غیر قانونی چارجڈ فیس بھی وصول کی جارہی ہے‘ بلدیہ عظمیٰ کے افسران کی مبینہ آشیرباد سے مافیا کی لوٹ مار
سوک سینٹر کے اطراف بھی دگنی فیس کی وصولی‘ شہریوں کا ایڈمنسٹریٹر کراچی سے لوٹ مار کے خلاف کارروائی کا مطالبہ
کراچی (سٹی رپورٹر)بلدیہ کراچی کے افسران کی مبینہ سرپرستی،چارجڈ پارکنگ مافیا نے شہریوں کودونوں ہاتھوں سے لوٹنا شروع کردیا،غیر قانونی چارجڈ پارکنگ کے ساتھ ساتھ کے ایم سی کی اپنی چارجڈ پارکنگ سائٹس پر بھی لوٹ مار کا بازار گرم،سفاری پارک ،سندھ باد ،الدین پارک سمیت شہر کی دیگر قانونی اور غیر قانونی چارجڈ پارکنگز میںمقررہ فیس سے 200فیصد سے زائد فیس شہریوں سے وصول کئے جانے کا سلسلہ جاری،اسپتالوں اور تجارتی مراکز اور کے ایم سی کے پاکوں میں قائم سرکاری چارجڈ پارکنگز میںموٹر سائیکل کی فیس5روپے کے بجائے20روپے جبکہ گاڑیوں کی پارکنگ20روپے کے بجائے30,40,50وپے تک وصول کی جانے لگی،بلدیہ عظمی کراچی محکمہ چارجڈ پارکنگ کے افسران کی مبینہ آشیر باد سے شہر بھر میں چارجڈ پارکنگ مافیا نے لوٹ مچارکھی ہے،شہر میں کسی مقام پر بھی مقررہ فیس وصول نہیں کی جارہی اس کے باوجود محکمہ چارجڈ پارکنگ کے افسران نے مجرمانہ خاموشی اختیار کر رکھی ہے،شہر میں گاڑیوں کی20روپے جبکہ موٹر سائیکل کی5 روپے چارجڈ پارکنگ فیس مقرر ہے جبکہ اس کے برعکس شہریوں سے 200فیصد سے زائد فیس وصول کی جارہی ہے،شہر میں موٹر سائیکل کی فیس20روپے جبکہ گاڑیوں کی 100روپے تک وصول کی جارہی ہے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ محکمہ چارجڈ پارکنگ کے افسران نے مبینہ طور پر یومیہ بھاری نذرآنہ وصول کر کے ٹھیکیداروں کو لوٹ مار کی کھلی اجازت دید ی ہے،جبکہ پارکس میں قائم چارجڈ پارکنگز میں شہریوں سے زائد پارکنگ فیس کی مد میں حاصل ہونے والی رقم میں سے مبینہ طور پر پارکس میں تعینات محکمہ سی ایس آر کے افسران بھی یومیہ حصہ وصول کر کے خاموشی اختیار کیئے ہوئے ہیں دوسری جانب بلدیہ عظمی کراچی کے ہیڈ آفس سوک سینٹر کے اطراف بھی کھلے عام شہریوں سے چارجڈ پارکنگ کے نام پر دگنی فیس وصول کرنے کا سلسلہ جاری ہے ،شہریوں نے محکمہ چارجڈ پارکنگ کے افسران کی مبینہ لوٹ مار پر ایڈ منسٹریٹر کراچی سجاد حسین عباسی چیئرمین اینٹی کرشن سے سخت نوٹس اور کارروائی کا مطالبہ کیا ہے۔

Tags: