واٹربورڈ کے واجبات کی عدم ادائیگی 3ارب روپے کے نادہندہ تاجروں اور صنعت کاروں کیخلاف بڑی کارروائی کا فیصلہ

October 3, 2015 2:23 pm0 commentsViews: 13

نارتھ کراچی، فیڈرل بی ایریا اور لانڈھی کورنگی کے انڈسٹریل ایریاز کے بڑے نادہندہ افراد کی فہرستیں تیار کرلی گئیں، کارروائی کیلئے شہر کے تین ڈپٹی کمشنرز سے بھی مدد طلب کرلی گئی ہے
کراچی( نیوز ڈیسک) کراچی واٹر اینڈ سیوریج بورڈنے تین انڈسٹریل ایریا زکے3 ارب روپے کے نادہندہ تاجروں اور صنعتکاروں کے خلاف بڑی کارروائی کا فیصلہ کرلیا ہے‘ یہ فیصلہ ڈائریکٹر انڈسٹریز محسن ذوالفقار قائم خانی کی جانب سے ڈپٹی منیجنگ ڈائریکٹر افتخار احمد خان کو ڈیفالٹرز کی نشاندہی پر کیا گیا ہے‘ اس سے قبل شہر کے3 ڈپٹی کمشنرز سے بھی مدد طلب کی جاچکی ہیں اور اب ڈیفالٹرز کے واٹر کنکشن منقطع کرنے کی تیاریاں جاری ہیں‘ تفصیلات کے مطابق واٹر بورڈ کے ڈائریکٹر انڈسٹریز محسن ذوالفقار قائم خانی نے واٹر بورڈ کے ڈپٹی منیجنگ ڈائریکٹر ٹیکنیکل سروسز افتخار احمد خان کو خصوصی اہمیت کا حامل ایک خط بھجوایا ہے‘ خط کے ساتھ نارتھ کراچی انڈسٹریل ایریا‘ ایف بی ایریا انڈسٹریل ایریا‘ لانڈھی اور کورنگی انڈسٹریل ایریا کے بڑے نادہندہ صارفین کی علیحدہ فہرستیں بھی منسلک کی گئی ہیں اور کہا گیا ہے کہ ایم ڈی واٹر بورڈ کی ہدایت کے مطابق نادہند ہ تاجروں اور صنعتکاروں کے واٹر کنکشنز منقطع کرنے ہیں لہٰذا آپ متعلقہ چیف انجینئرز کو ضروری ہدایت جاری کردیں‘ واٹر بورڈ کے ایک اور ڈائریکٹر خالد سلطان کی جانب سے ڈپٹی کمشنر کورنگی کو لکھے گئے خط میں ایک ارب85 کروڑ11لاکھ42 ہزار79 روپے وصول کرنے کی درخواست کی گئی ہے‘ دوسرے خط میں ڈپٹی کمشنر ایسٹ سے77کروڑ 90لاکھ41ہزار 8882 روپے وصول کرنے کیلئے کہا گیا جبکہ تیسرے خط میں ڈپٹی کمشنر ملیر سے درخواست کی گئی ہے کہ وہ واٹر بورد کے ڈیفالٹر تاجروں اور صنعتکاروں سے لینڈ ریونیو ایکٹ کے تحت41 کروڑ1لاکھ 90ہزار 90 روپے وصول کرکے دیں اس طرح 3ڈپٹی کمشنر سے مجموعی طور پر 3ارب روپے وصول کرنے کو کہا گیا ہے جبکہ ایم ڈی واٹر بورڈ سائٹ لمیٹڈ سے تقریباً2ارب روپے کی وصولی کیلئے کوششیں کررہے ہیں۔

Tags: