طالبان نے بد خشاں کے ایک ضلع پر قبضہ کر لیا،50 فوجی ہلاک

October 3, 2015 2:43 pm0 commentsViews: 30

شدید لڑائی کے بعد دروج پر قبضہ کی تصدیق قندور پر قبضہ چھڑانے کے باوجود سرکاری فوج کو مزاحمت کا سامنا
کابل( نیٹ نیوز) افغان طالبان نے شدید لڑائی کے بعد صوبہ بد خشاں کے ضلع وردج پر قبضہ کر لیا ہے۔ لڑائی میں50 سرکاری فوجی ہلاک جبکہ قندوز میں ابھی تک سرکاری فورسز کو مزاحمت کا سامنا ہے، شہر سے طالبان کو مکمل طور پر نہیں نکالا جا سکا۔ خبر رساں ادارے رائٹر کے مطابق شمال مشرقی صوبے بدخشاں کے گورنر کے ترجمان نوید فروتان نے کہا ہے کہ طالبان نے شدید لڑائی کے بعد صوبے کے ضلع وردج پر قبضہ کرلیا ہے۔ ہماری فورسز کو بروقت کمک حاصل نہیں ہوئی۔ طالبان کی تعداد بہت زیادہ تھی اس لئے فورسز پسپا ہوگئیں۔ طالبان ترجمان ذبیح اللہ مجاہد نے دعویٰ کیا کہ وردج ضلع میں28 چیک پوسٹوں پر قبضہ کر لیا ہے جبکہ لڑائی میں50 فوجی ہلاک کر دئیے گئے۔ آزاد ذرائع سے طالبان کے دعوے کی تصدیق نہیں ہو سکی۔ سرکاری بیان کے مطابق حملہ اس وقت شروع ہوا جب طالبان نے کئی دیہات میں چیک پوسٹوں پر چھاپے مارے اور کمک کا راستہ روک کر قبضہ کر لیا۔ لڑائی میں دو پولیس اہلکار ہلاک اور تین کے لاپتہ ہونے کی اطلاعات ہیں۔ ادھر قندوز پر سرکاری قبضہ کے بعد طالبان کی جانب سے سیکورٹی فورسز کو شدید ترین مزاحمت کاسامنا ہے۔

Tags: