سندھ حکومت نے محرم الحرام میں امن و امان کیلئے پاک فوج طلب کرلی

October 7, 2015 4:10 pm0 commentsViews: 21

کراچی(اسٹاف رپورٹر)سندھ حکومت نے سیکیورٹی خدشات کے پیش نظر محرم الحرام کے دوران امن و امان کیلئے پاک فوج طلب کرلی۔تفصیلات کے مطابق سندھ حکومت کی جانب سے پاک فوج اور وفاقی حکومت کو لکھے گئے خط میں کہا گیا ہے کہ محرم الحرام کے دوران سیکورٹی خدشات کے پیش نظر پاک فوج تعینات کی جائے۔خط میں درخواست کی گئی ہے کہ کراچی میں پاک فوج کی8 کمپنیاں، حیدرآباد ڈویژن میں400 فوجی جوان، شہید بے نظیرآباد ڈویژن میں2 پلاٹون، سکھر ڈویژن کے لیے پاک فوج کی2 کمپنیاں اور لاڑکانہ ڈویژن کے لیے 700 فوجی جوان تعینات کئے جائیں۔

رینجرز کا محرم کے مرکزی جلوس کی زمینی و فضائی نگرانی کا فیصلہ
ڈی جی رینجرز بلال اکبر کی زیر صدارت اہم اجلاس‘ سیکورٹی صورتحال کا جائزہ‘ ممکنہ دہشتگردی سے نمٹنے پر غور
اجلاس میں پولیس کے اعلیٰ افسران و دیگر حکام کی شرکت‘ محرم کے دوران سیکورٹی انتظامات کو حتمی شکل دیدی اسنیپ چیکنگ اور اسنائپر تعینات کئے جائیں گے
کراچی (کرائم رپورٹر) پاکستان رینجرز (سندھ) کا ایک اعلیٰ سطحی اجلاس ڈی جی رینجرز سندھ میجر جنرل بلال اکبر کی زیر صدارت ہوا جس میں محرم الحرام کے موقع پر سیکیورٹی کے انتظامات کا جائزہ لیا گیا تاکہ کسی بھی ممکنہ دہشت گردی کے خطرے سے موثر طریقے سے نمٹا جاسکے۔ اجلاس میں ایڈیشنل آئی جی پولیس ، ڈی آئی جیز ایسٹ ویسٹ سائوتھ، اسپیشل برانچ، جوائنٹ ڈائریکٹر جنرل، آئی بی کراچی ایڈمن، سی ڈی جی کے، سی آئی اے، سی ٹی ڈی، ٹریفک، کے الیکٹرک کے نمائندے اور اس کے علاوہ اعلیٰ رینجرز حکام نے شرکت کی۔ تفصیلات کے مطابق رینجرز اور پولیس نے مشترکہ طور پر محرم الحرام کے حوالے سے امن و امان کی صورتحال کو یقینی بنانے کے لیے سیکورٹی کے انتظامات کو حتمی شکل دی۔ سندھ رینجرز اور پولیس کو ہائی الرٹ کردیا گیا ہے۔ رینجرز اور پولیس نے تمام بڑے شہروں میں اسنیپ چیکنگ شروع کردی ہے۔ محرم الحرام کے موقع پر رینجرز کی بھاری نفری کراچی کے مرکزی جلوسوں کی نگرانی کرے گی۔ اس کے ساتھ ساتھ ہیلی کاپٹر کے ذریعے جلوس کی فضائی نگرانی بھی کی جائے گی اور رینجرز کے سراغ رساں کتوں کی مدد سے جلوس کے راستوں کو چیک کیا جائے گا۔ اس کے علاوہ جلوس کے گزرنے والے راستوں پر واقع اونچی عمارتوں پر رینجرز اور پولیس کے اسنیپر تعینات کیے جائیں گے جو کہ شر پسند پر کڑی نظر رکھیں گے۔ جلوس کی گزرگاہوں میں آنے والے راستوں کو مکمل سیل کیا جائے گا۔

Tags: