دودرجن کمپنیوں کا ’’منرل واٹر‘‘مضرصحت نکلا

October 8, 2015 1:44 pm0 commentsViews: 32

ان کمپنیوں کا پانی جراثیم آلودہ ہونے سے جگر کے کینسر، یرقان اور گردے کے امراض میں اضافہ ہونے لگا
پانی میں حد سے زیادہ سنکھیا(زہر) کی مقدار بڑھنے سے یہ انسانی جانوں کیلئے مہلک ہے، پی سی آر ڈبلیوآر کی رپورٹ
اسلام آباد( نیوز ڈیسک) محفوظ پانی ( منرل واٹر) کے نام پر فروخت کی جانے والی تقریباً دو درجن برانڈ کے مبینہ طور پر جراثیمی اور کیمیائی طور پر آلودہ ہونے کا انکشاف ہوا ہے۔ وزارت سائنس و ٹیکنا لوجی کے ادارے پاکستان آبی وسائل کی تحقیقات کونسل ( پی سی آر ڈبلیو آر ) نے منزل واٹر سے متعلق اپنی جولائی تا ستمبر2015ء سہ ماہی رپورٹ جاری کرتے ہوئے انکشاف کیا ہے کہ ملک میں فروخت ہونیوالے23 برانڈز کے پینے کے پانی کے نمونے جراثیمی اور کیمیائی طور پر آلودہ ہیں جن کے پینے سے جگر کے کینسر، دل کی بیماریاں، یرقان، گردے وغیرہ کی بیماریاں لاحق ہو سکتی ہیں۔ پی سی آر ڈبلیو آر کے مطابق جولائی تا ستمبر 2015ء کی سہ ماہی میں اسلام آباد، راولپنڈی، ڈی آئی خان، ٹنڈو جام، لاہور، بہاول پور ، کوئٹہ، پشاور، سرگودھا، سیالکوٹ، فیصل آباد، ساہیوال، ملتان، گوجرانوالہ اور کراچی سے بوتل بند منزل پانی کے119 برانڈ کے نمونے حاصل کئے گئے۔ ان نمونوں کا پاکستان اسٹینڈرڈ اینڈ کوالٹی کنٹرول اتھارٹی ( پی ایس کیو سی اے) کے تجویز کر دہ معیار کے مطابق تجزیہ کیا گیا تو23 برانڈ پینے کے پانی میں سنکھیا کی زیادہ مقدار کی موجودگی بے حد مضر صحت ہے، اس کی وجہ سے پھیپھڑوں، مثانے، جلد پر نشان، گردے، ناک اور جگر کا کینسر ہو سکتا ہے۔

Tags: