او جی ڈی سی ایل ہائوسنگ اسکیم میں81 کروڑ کی کرپشن

October 10, 2015 5:23 pm0 commentsViews: 22

کرپٹ ٹولہ شکنجے میں آگیا، غیر قانونی طور پر ٹھیکہ دیا گیا، تین افراد کیخلاف مقدمہ درج کر لیا گیا
راولپنڈی( یو پی پی) او جی ڈی سی ایل ہائوسنگ سوسائٹی میں81 کروڑ روپے کی لوٹ مار ‘ کرپٹ ٹولہ شکنجے میں آگیا‘ آئل اینڈ گیس ڈیولپمنٹ کارپوریشن لمیٹڈ کے ملازمین کو اپنا گھر فراہم کرنے کیلئے بنائی جانیو الی کو آپریٹوہائوسنگ سوسائٹی میں 81کروڑ روپے کی مبینہ کرپشن کاانکشاف ہوا ہے۔ ایف آئی اے ذرائع کے مطابق 2003ء میں کارپوریشن کے ملازمین پر مشتمل افراد نے سوسائٹی بنائی۔ عرفان بابر خان صدر جبکہ محمد رشید جنجوعہ سوسائٹی کے سیکریٹری بنے‘ کارپوریشن کے ملازمین کو بتایا گیا کہ ان کے پاس 1800 کنال اراضی ہے‘ سوسائٹی ٹی ایم اے مری میں رجسٹرڈ کرالی گئی ہے‘ دونوں حضرات نے اس ضمن میں فیضان پرائیویٹ لمیٹڈ نامی کمپنی کے مالک فیضان کو ڈیولپمنٹ کا ٹھیکہ دیا‘ مذکورہ ٹھیکہ بھی غیر قانونی طور پر دیا گیا اور کوئی ٹینڈر بھی نہیں کیا دیا نہ ہی سوسائٹی کیلئے این او سی لیا گیا اور نہ ہی ٹی ایم اے مری میں رجسٹریشن کی گئی شکایات موصول ہونے پر ایف آئی اے نے تحقیق کی تو پتہ چلا کہ موقع پر صرف 300 کنال زمین موجود ہے اور تا حال کوئی ڈیولپمنٹ ہی نہیں کی گئی‘2004 ء سے2012 تک اس ضمن میں81 کروڑ کی مبینہ کرپشن کی گئی اس حوالے سے ایف آئی اے نے سابق صدر عرفان بابر خان‘ سیکریٹری محمد کورشید اور ڈیولپر فیضان کیخلاف مقدمہ درج کرلیا۔

Tags: