پانی کا بحران کراچی میں مصنوعی بارش برسانے کا ابتدائی منصوبہ تیار

October 12, 2015 4:53 pm0 commentsViews: 32

واٹر بورڈ‘ محکمہ موسمیات اور دیگر اداروں کے تعاون سے مصنوعی بارش کرکے حب ڈیم کو بھرا جائے گا
مصنوعی بارش کا منصوبہ مون سون میں کامیاب ہوسکتا ہے‘ اکتوبر اور نومبر میں بادلوں کی مطلوبہ مقدار دستیاب نہیں ہوتی‘ محکمہ موسمیات
کراچی( اسٹاف رپورٹر) کراچی میں پانی کے بحران پر قابو پانے کیلئے مصنوعی بارش کی تجویز پر غور کیا جا رہا ہے۔ ادارہ فراہمی و نکاسی آب کے کراچی نے مصنوعی بارش کا ابتدائی منصوبہ تیار کر لیا ہے۔ جلد سیکریٹری لوکل گورنمنٹ کے دفتر میں منظوری کیلئے جمع کرایا جائے گا۔ تفصیلات کے مطابق وزیر بلدیات ناصر شاہ کی ہدایت پر واٹر بورڈ نے کراچی میں پانی کے بحران کو کنٹرول کرنے کیلئے مصنوعی بارش کا ابتدائی منصوبہ تیار کرلیا۔ جسے منظوری ملتے ہی سندھ حکومت، پورٹ اینڈ شپنگ، محکمہ موسمیات، ایوی ایشن اور دیگر متعلقہ اداروں کے ساتھ جامع منصوبہ بندی تیار کی جائے گی ایم ڈی واٹر بورڈ نے بتایا کہ منصوبہ قابل عمل پایا گیا تو عملدر آمد کرکے حب ڈیم کے قریب وجوار میں مصنوعی بارش کے ذریعے ڈیم کو بھرا جائے گا۔ محکمہ موسمیات کے مطابق مصنوعی بارش کیلئے مخصوص قسم کے بادلوں کی ضرورت ہوتی ہے۔ جب مطلوبہ مقدار میں بادل آسمان پر نمو دار ہوتے ہیں تو اس پر ہوائی جہاز سے سوڈیم کلورائیڈ کا اسپرے کرکے مصنوعی بارش کرائی جا تی ہے۔ یہ طریقہ دبئی، چین اور جاپان سمیت دنیا کے50 ممالک میں استعمال کیا جا رہا ہے۔ یہ تجربہ 2001ء میں تھر پار کر میں کیا جا چکا ہے۔ محکمہ موسمیات ذرائع نے بتایا کہ مصنوعی بارش کا منصوبہ مون سون کے موسم میں کامیاب ہو سکتا ہے۔ مون سون سیزن ختم ہو چکا ہے اکتوبر نومبر میں بادلوں کی مطلوبہ مقدار دستیاب نہیں ہوتی۔ سردیوں میں کراچی میں بارشیں قلیل مقدار میں ہوتی ہیں اس لئے سردیوں میں اس منصوبے کے امکانات کم ہیں۔

Tags: