موٹر وے کیخلاف18 اکتوبر کو حیدرآباد تا کراچی ہڑتال کا اعلان

October 13, 2015 1:58 pm0 commentsViews: 23

سپر ہائی وے پر30 ہزار افراد دھرنا دینگے، احتجاجی تحریک شروع کرنے کا فیصلہ بھی کر لیا گیا
کراچی( استاف رپورٹر) کراچی سے حیدر آباد تک سپر ہائی وے کے دونوں اطراف پر موجود ہوٹل اور پیٹرول پمپ مالکان و دیگر کاروبار کرنے والے اسٹیک ہولڈرز اور گوٹھوں کے معززین نے موٹر وے بننے کے خلاف آج سے مرحلہ وار تحریک چلانے اور18 اکتوبر کو حیدر آباد سے کراچی تک کاروبار بند کرکے شٹر ڈائون ہڑتال کی کال دے دی، 30 ہزار سے زائد لوگ جمع کرکے دھرنا دینگے،  ترقی کے نام پر لاکھوں خاندانوں کو بیروزگار کیا جا رہا ہے۔ سپر ہائی وے کے دونوں اطراف  لاکھوں لوگوں کو زبردستی نقل مکانی کرائی جا رہی ہے۔ یہ بڑی نا انصافی ہے۔ عدالت میں پٹیشن درج کرائی ہے ایک بار پھر موٹر وے کے نام پر لاکھوں خاندانوں کو بے گھر کیا جا رہا ہے۔ ان خیالات کا اظہار کراچی سے حیدر آباد تک سپر ہائی وے کے دونوں اطراف  پر موجود ہوٹل اور پیٹرول پمپ مالکان و دیگر کاروبار کرنے والے اسٹیک ہولڈرز اور گوٹھوں کے معززین کی جانب سے موٹر وے بننے کے خلاف دئیے گئے دھرنے سے آل پاکستان سی این جی اینڈ پیٹرول پمپ ایسوسی ایشن کے صدر شبیر سلیمان، جی آل گڈز ٹرانسپورٹ ایسوسی ایشن ملک شبیر، حاجی فیض محمد پالاری، فیاض پالاری نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ موٹر وے کے خلاف بھر پور احتجاج کیا جائیگا۔

Tags: