بلدیہ عظمیٰ محرم کیلئے انتظامات کو حتمی شکل نہ دے سکی

October 13, 2015 2:48 pm0 commentsViews: 37

شیعہ علماء کے ساتھ اب تک کوئی اجلاس منعقد نہیں کیا گیا،گورنر و کمشنر ہائوس اپنے لائحہ عمل بناچکے
کراچی(سٹی رپورٹر)محرم الحرام کے آغاز میں صرف دو روز باقی رہ جانے کے باوجود بلدیہ عظمیٰ کراچی عاشورہ  محرم کے حوالے سے انتظامات کو حتی شکل نہ دے  نہ ہی محرم الحرام کے کاموں کے حوالے سے شیعہ علماء اور بلدیہ عظمیٰ کے مابین تاحال کوئی اجلاس منعقد کیا جاسکا۔اس سے قبل یہ روایت رہی ہے کہ محرم الحرام سے15روز قبل بلدیہ عظمیٰ کراچی اور شیعہ علماء کے درمیان باقائدہ طور پراجلاس منعقد کرکے محرم الحرام کے کاموں کے حوالے سے لائحہ عمل تیار کیا جاتا تھا جس کے بعد عاشورہ کے جلوسوں کی گزرگاہوں کی مرمت صفائی ستھرائی اور روشنی کے مناسب انتظامات کے کاموں کا فوری طور پر آغاز کر دیا جاتا تھا جبکہ اجلاس میں بلدیہ عظمیٰ کراچی کے محکمہ ٹیکنیکل سروسز محکمہ میڈیکل اینڈ ہلتھ اور محکمہ میونسپل سروسز کے افسران شرکت کرتے تھے جن کے باہمی مشورے سے محرم الحرام کے کاموں کو حتمی شکل دی جاتی تھی تاہم ہیلتھ  ایڈ منسٹریٹر بلدیہ عظمیٰ کراچی کی شد مصروفیات کے باعث تا حال محرم الحرام کے کاموں کو حتمی شکل نہیں دی جاسکی ہے جبکہ بلدیہ عظمیٰ کراچی کے برعکس گورنر ہاوس سندھ اور کمشنر ہاوس کراچی نے روایات کو برقرار رکھتے ہوئے محرم الحرام کے ہولے سے کیئے جانے والے اقدامات کے سلسلے میں اجلاس کا انعقاد کر کے اپنا اپنا لائحہ عمل ترتیب دے دیا ہے۔

Tags: