پی آئی اے300 ارب روپے کا مقروض ہے، چیئرمین کا انکشاف

October 16, 2015 4:21 pm0 commentsViews: 22

قومی ایئر لائن کو سالانہ30 سے40 ارب روپے قرضوں کی ادائیگی اور آپریشنل معاملات چلا نے کیلئے درکار ہوتے ہیں
پی آئی اے کی تباہی میں سیاسی مداخلت، نااہل افراد کی تقرری، عملے کی زیادتی کے عوامل شامل ہیں، نرگس سیٹھی
اسلام آباد( نیوز ڈیسک) چیئرمین پی آئی اے نے کہا ہے کہ قومی ایئر لائن کی مالی اور انتظامی حالت انتہائی خراب ہے‘ ایئر لائن اس وقت 300 ارب روپے کی مقروض ہے۔ پی آئی اے کو تباہی کے دہانے تک پہنچانے میں ہم سب کا ہاتھ ہے‘ اس کو سدھارنے کیلئے صرف ایک سال کافی نہیں ہے‘ نیب اور ایف آئی اے کے خوف کی وجہ سے کوئی بھی اہل شخص پی آئی اے میں ذمہ داریاں سنبھالنے کیلئے تیار نہیں ہے‘ پی آئی اے کو سالانہ 30 ارب سے40 ارب روپے اپنے قرضوں کی ادائیگی اور آپریشنل معاملات کو چلانے کیلئے درکار ہوتے ہیں۔ ان خیالات کااظہار انہوںنے پلڈاٹ کے زیر اہتمام پی آئی اے کی کارکردگی کے حوالے سے منعقدہ بریفنگ سے خطاب کے دوران کیا۔ بریفنگ کا آغاز کرتے ہوئے سابق سیکریٹری نرگس سیٹھی نے پی آئی اے کی2سالہ کارکردگی کا جائزہ پیش کرتے ہوئے بتایاکہ پی آئی اے کی تباہی کی زیادہ تر ذمہ داری سیاسی مداخلت‘ نااہل افراد کی تقرری‘ عملے کی زیادتی‘ مارکیٹ کیلئے جامع حکمت عملی کی عدم تیاری ہے۔

Tags: