سندھ حکومت نے مجھے راستے سے ہٹانے کا فیصلہ کرلیا، نبیل گبول

October 17, 2015 4:22 pm0 commentsViews: 29

کراچی آپریشن کی حمایت پر دھمکیاں دی جارہی ہیں
میں نے چنوں ماموںکی کرپشن بے نقاب کی تھی
مجھے کچھ ہوا تو اس کی تمام تر ذمہ دار سندھ حکومت ہوگی
سندھ کا منظر نامہ تبدیل ہونے والا ہے، میڈیا سے گفتگو
کراچی(اسٹاف رپورٹر)سابق رکن قومی اسمبلی نبیل گبول نے کہا ہے کہ مجھے دھمکیاں دی جارہی ہیں کیونکہ میں کراچی آپریشن کی کھل کر حمایت کررہا ہوں۔ میں نے چنوں ماموں کی کرپشن بے نقاب کی اور تودہ گرنے کے حوالے سے بھی حقائق بتائے اس لیے سندھ حکومت نے مجھے راستے سے ہٹانے کا فیصلہ کرلیا ہے۔ اگر مجھے کچھ ہوا تو ذمہ دار سندھ حکومت ہوگی۔ سندھ کا سیاسی منظر نامہ جلد تبدیل ہوگا اور بڑی تبدیلی آئے گی۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے جمعہ کو سندھ ہائی کورٹ میں پیشی کے بعد میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔ نبیل گبول نے کہا کہ سندھ حکومت کراچی آپریشن سے پریشان ہے۔ ایف آئی اے اورنیب کا راستہ روکنے کے لیے قانون سازی کرنے جارہی ہے۔ انہوںکہا کہ میرا اور ڈاکٹر ذوالفقار مرزا کا سیاسی مستقبل ایک ہے۔ نبیل گبول نے مزید کہا کہ بلدیاتی الیکشن میں بھرپور حصہ لیں گے۔ لیاری سے دو آزاد پینل کھڑے کررہا ہوں۔ اس حوالے سے جلد ہی فنکشنل لیگ کے سربراہ پیر پگارا سے ملاقات کروں گا۔ انہوںنے کہا کہ مجھ سے اچھی تو ماڈل ایان علی ہے جن کو دو موبائلیں اور گارڈز فراہم کیے گئے ہیں اور مجھے سیاستدانوں کی کرپشن کے راز کھولنے پر سیکورٹی نہیں دی جارہی ہے۔

Tags: