کارکنوں کی بلاجواز گرفتاریوں اورچھاپوں پر ایم کیو ایم سراپا احتجاج

October 19, 2015 4:18 pm0 commentsViews: 17

ایم کیو ایم کو دیوار سے لگانے کی سازش ہورہی ہے، گرفتاریوں اورچھاپوں کو فوری بند کیاجائے
وزیراعظم ، وزیرداخلہ اور وزیراعلیٰ سندھ فوری طور پر نوٹس لے کر ذمہ داروں کیخلاف کارروائی کریں، رابطہ کمیٹی
کراچی( اسٹاف رپورٹر) متحدہ قومی موومنٹ کی رابطہ کمیٹی نے کراچی کے مختلف علاقوں  سے رینجرز اور سادہ لباس اہلکاروں کی جانب سے بے گناہ کارکنان کی گرفتاریوں اور بلا جواز چھاپوں کی سخت الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے ایسے اقدامات کو ایم کیو ایم کو دیوار سے لگانے کی سازش قرار دیا ہے۔ رابطہ کمیٹی نے کہا کہ گزشتہ48 گھنٹوں کے دوران کورنگی یونٹ69 کے کارکن یوسف، پی آئی بی  یونٹ49  کے کارکن سراج حسن صدیقی اور نارتھ ناظم آباد یونٹ 173کے کارکن طارق مرتضیٰ کو سادہ لباس اہلکاروں نے گرفتار کرلیا۔ جبکہ ایم کیو ایم شاہ فیصل یونٹB-103 کے ذمہ دار سرفراز شیخ، پی آئی بی یونٹ 57 کمیٹی کے ذمہ دار محمد سرور، لیاری سیکٹر یونٹ29 کے کارکن عدنان اور شاہ فیصل یونٹ107کے کارکن رشید احمد راجپوت کو رینجرز اہلکاروں نے گرفتار کرلیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ان کارکنان کے حوالے سے ان کے اہل خانہ یا کسی تنظیمی ذمہ دار کو کوئی معلومات  فراہم نہیں کی جا رہی ہے۔ گرفتار کارکنان کی زندگیوں سے متعلق ان کے اہل خانہ اور تنظیم کو شدید خدشات درپیش ہیں۔  رابطہ کمیٹی نے وزیر اعظم پاکستان میاں محمد نواز شریف، وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان اور وزیر اعلیٰ سندھ سے مطالبہ کیا کہ وہ شہر بھر میں کارکنان کی گرفتاریوں کا سختی سے نوٹس لے کر قانون نافذ کرنے والے اداروں کی بلا جواز چھاپوں کا سلسلہ رکوائیں اور کارکنان کے حوالے سے ان کے اہل خانہ کو معلومات فراہم کرنے کے احکامات جاری کریں۔

Tags: