سانحہ کار ساز میں پرویز مشرف اور ارباب رحیم بری الزمہ نہیں، سراج درانی

October 19, 2015 4:30 pm0 commentsViews: 27

افسوس کہ سانحہ کے ذمہ داروں کو سزا ملی اور نہ ہی ان سے تفتیش کی گئی، سیکورٹی کی فراہمی حکمرانوں کی ذمہ داری تھی
معاملے کی تحقیقات ہونی چاہیے، عدالتی حکم کے باوجود واقعہ کی ایف آئی آر درج نہیں کی گئی، نثار کھوڑو
کراچی( اسٹاف رپورٹر) اسپیکر سندھ اسمبلی آغا سراج درانی نے کہا کہ سانحہ کار ساز کے ذمہ دار اس وقت کے صدر مملکت پرویز مشرف اور وزیر اعلیٰ سندھ ارباب غلام رحیم ہیں۔ ان کا نام بھی مقدمہ میں درج کیا جائے۔ وہ اتوار کو شہداء یادگار پر حاضری کے بعد صحافیوں سے بات چیت کر رہے تھے آغا سراج درانی نے کہا کہ افسوس ہے کہ سانحہ کے ذمہ داروں کو سزا نہیں ملی اور نہ ہی ان سے تفتیش ہو سکی ہے۔ بینظیر بھٹو اور ان کے قافلے کو سیکورٹی فراہم کرنا وقت کے حکمرانوں کی ذمہ داری تھی اگر سیکورٹی لیپس ہوا ہے تو اس کی ذمہ داری بھی حکمرانوں کی ہے ہم پہلے دن سے یہ کہتے چلے آرہے تھے کہ پرویز مشرف ارباب غلام رحیم بری الزمہ نہیں ہیں معاملے کی تحقیقات  ہونی چاہئے۔ اس موقع پر وزیر اطلاعات سندھ نثار کھوڑو نے کہا کہ مشرف حکومت میں عدالتی حکم کے باوجود سانحہ کار ساز کی ایف آئی آر درج نہیں کی گئی۔ بہت سی جماعتیں پیپلز پارٹی کے خلاف ہیں مگر پیپلز پارٹی ان کا مقابلہ کرنا چاہتی ہے پیر پگارا نے بی بی سے متعلق بات کی مگر ذوالفقار مرزا اس وقت خاموش رہے۔

سانحہ کارساز کے 177 افراد
کے قاتلوں کا سراغ تاحال نہ مل سکا
کراچی( یو پی پی) سانحہ کار ساز کو 8 سال ہوگئے لیکن ملزمان کا پتہ اب تک نہیں چل سکا‘ دو دھماکوں میں177 افراد جاں بحق ہوئے‘ سابق وزیراعظم بینظیر بھٹو 18 اکتوبر 2007 ء کو 8سالہ جلا وطنی کے بعد پاکستان واپس پہنچیں تو کراچی میں کار ساز کے مقام پر ان کے استقبالی جلوس پر دھماکے کئے گئے جس میں177 افراد جاں بحق اور 600 سے زائد ہوگئے تھے۔

 پی پی رہنمائوں کی کارساز آمد
بلاول کی سیکورٹی دلکش ادائوں والی لیڈی کمانڈوز کے سپرد تھی
کالا چشمہ لگائے اور خوبصورت ٹوپیاں پہنے یہ کمانڈوز انتہائی چاک و چوبند تھیں
کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک)سانحہ کارساز کی برسی کے موقع پر پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کی آمد کے موقع پر سیکورٹی کے سخت انتظامات کیے گئے، سیکورٹی لیڈی کمانڈوز کے سپرد تھی۔ اس موقع پر شاہراہ کارساز کا ایک ٹریک بھی بند کررکھا گیا۔ بلاول کی سیکورٹی کالا چشمہ لگائے، خوبصرت ٹوپیاں پہنے، ہاتھوں میں جدید ہتھیار اٹھائے دلکش ادائوں والی لیڈی کمانڈوز کے سپرد تھیں جو اس موقع پر انتہائی چاک و چوبند نظر آرہی تھیں۔ اس موقع پر پیپلزپارٹی کے کارکن بھی بڑی تعداد میں موجود تھے۔

Tags: