شہر میں سرکاری زمینوں پر قبضہ ہونے لگا، غیرقانونی تعمیرات بھی جاری

October 19, 2015 4:47 pm0 commentsViews: 19

نارتھ کراچی سیکٹر11-Aمیں سڑک پر غیرقانونی تعمیرات ، مکینوں کو اعتراض کرنے پر مافیا کی دھمکیاں
کراچی (سٹی رپورٹر) بلدیہ عظمیٰ کراچی کے محکمہ لینڈ کے بااثر افسران کی سر پرستی میںشہر بھر میں سرکاری زمینوں پر قبضہ ہونے لگا، شہر بھر میںغیر قانونی تعمیرات کے خلاف جاری کارروائی کے باوجود غیر قانونی تعمیرات اور قبضہ رک نہ سکا۔ تفصیلات کے مطابق نارتھ کراچی سیکٹر 11-A میں سڑک پر قبضہ کر کے غیر قانونی تعمیرات کا سلسلہ جاری ہے علاقہ مکینوں کے اعتراض پر قبضہ مافیا اور بااثر افراد کی جانب سے علاقہ مکینوں کو سنگین نتائج کی دھمکیاں بھی دی جا رہی ہیں۔ نارتھ کراچی سیکٹر 11-A میں جس جگہ پر قبضہ کر کے غیر قانونی تعمیرات جاری ہیں وہ ماسٹر پلان میں شریک ہے۔ یہی نہیں بلکہ 2009ء میں سڑک پر بنائے گئے ان پلاٹوں پر تعمیرات کے لیے نقشہ بھی منظور کرلیا گیا تھا جسے سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی سے منسوخ کر کے تعمیرات روکنے کا حکم بھی دے دیا تھا۔ دوسری جانب سندھ حکومت کی ہدایت پر زور و شور سے شروع کی گئی انسداد تجاوزات مہم بااثر افسران کی عدم دلچسی اور قبضہ مافیا سے ملی بھگت کے باعث بے اثر ہوچکی ہے ۔

Tags: