پاکستان انجینئرنگ کونسل فیسوں میں اضافے سے گریز کرے، کنٹریکٹرز

October 19, 2015 4:51 pm0 commentsViews: 30

کونسل کے کراچی آفس نے کنٹریکٹرز کے لائسنس کی تجدید3 ماہ سے بند کر رکھی ہے، ایس ایم نعیم و دیگر
کراچی (سٹی رپورٹر)کراچی کنٹریکٹرز ایسوسی ایشن کی سینٹرل ایگزیکٹیو کمیٹی کا اجلاس ایسو سی ایشن کے چیرمین ایس ایم نعیم کاظمی کی زیر صدرات ایسوسی ایشن کے مرکزی دفتر میں منعقد ہو ا اس اجلاس میں پاکستان انجینئرنگ کونسل میں کنٹریکٹرزکو درپیش مشکلات پر غور کیا گیا اجلاس میں کنٹریکٹرزنے بتایا کہ پاکستان انجینئرنگ کونسل کے کراچی ریجنل آفس نے گزشتہ تین ماہ سے کنٹریکٹرز کے لائسنس کی تجدید اور نئے لائسنس کا اجراء بند کیا ہوا ہے جبکہ کنٹریکٹرز سے فیسوں کی وصولی کا سلسلہ شروع کیا ہوا ہے۔دوسری بات یہ ہے کہ اطلاعات موصول ہوئیں ہیں کہ گزشتہ ہفتے پاکستان انجینئرنگ کونسل کی گورننگ باڈی کے اجلاس میں (دو کروڑ ) کی آخری کیٹگری ( (C-6کو ختم کرنے اور کنٹریکٹرز لائسنس کی فیسوں میں اضافہ پر غور کیا گیا ہے اور منظوری حاصل کی جاری ہے جبکہ فیسوں میں دوسو فیصد اضافہ گزشتہ دو سال پہلے ہی کیا گیا تھا ۔ اجلاس میں مطالبہ کیا گیا ہے فیسوں کے اضافے کے فیصلے کو فوری واپس لیا جائے اور اپنے بنائے ہوئے قوانین پر اداروں میں عمل درآمد کرانے کو یقینی بنایا جائے ۔اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ اگر فیسوں میں کسی قسم کا اضافہ کیا گیا تو اس کے خلاف قانونی کارروائی  کی جائے گی۔ اجلاس میں ایسوسی ایشن کے سیکریٹری نشرواشاعت سعید مغل، فنانس سیکریٹری اشفاق شیروانی، کنور قمر عالم، زاہد احمد، عزیز اللہ ، اور دیگر نے شرکت کی ۔