تھر کول منصوبے میں مقامی باشندوں کو اولیت دی جائے گی، بلاول بھٹو

October 20, 2015 4:14 pm0 commentsViews: 24

تھر میں شروع کیا جانے والا منصوبہ 2018 تک مکمل ہو جائے گا، بریفنگ کے موقع پر خطاب
کراچی( اسٹاف رپورٹر) پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ تھرکول منصوبہ ان کی والدہ کا خواب تھا اور امید ہے کہ سندھ اینگرو کول مائننگ کمپنی کی جانب سے شروع ہونیوالا منصوبہ 2018 ء تک مکمل ہوجائیگا‘ تاہم ضرورت اس بات کی ہے کہ اس منصوبے سے ملک میں بجلی کا بحران ختم ہونے کے ساتھ ساتھ تھر کے مقامی باشندوں کی زندگیوں میں بھی معاشی تبدیلی آنی چاہئے ‘ ان خیالات کااظہار انہوںنے پیر کو بلاول ہائوس میں سندھ اینگرو کول مائننگ کمپنی کے چیف ایگزیکٹو آفیسر شمس الدین شیخ کی جانب سے تھرکول منصوبے کے متعلق دی جانیوالی بریفنگ کے موقع پر خطاب کرتے ہوئیکیا۔ اجلاس میں وزیراعلیٰ سندھ سید قائم علی شاہ‘ صوبائی وزیر انرجی و خزانہ سینیٹر تاج حیدر اور جمیل سومرو بھی شریک تھے۔ بریفنگ کے دوران بلاول زرداری کو بتایا گیا کہ38 مہینوں کے اندر 485 ملین ڈالر ز کی لاگت سے3.8 ملین ٹن سالانہ اوپن مائننگ منصوبہ تیار کیا جائیگا۔ اس موقع پر بلاول زرداری نے زور دیا کہ اس منصوبے میں تھر کے مقامی باشندوں کے مفادات کو اولیت دی جائیگی۔ یہ منصوبہ نہ صرف تھر بلکہ پاکستان کیلئے بھی رول ماڈل منصوبہ ہوگاجس میں تعلیم و صحت کے ساتھ ساتھ تمام سہولیات میسر ہوں گی۔

Tags: