بلدیاتی اداروں میں الیکشن سے قبل کروڑوں روپے ہڑپ کرنیکا منصوبہ، ترقیاتی منصوبوں کی بندر بانٹ

October 21, 2015 4:27 pm0 commentsViews: 20

ایف آئی اے، نیب اور اینٹی کرپشن سمیت قانون نافذ کرنے والے ادارے بلدیاتی افسران کو قابو کرنے میں ناکام
جمشید زون میں گاربیج کلیکشن کا کروڑوں روپے کا ٹھیکہ من پسند ٹھیکیدار کو دینے کے لیے دیگر کنٹریکٹرز کو ٹینڈر کی دستاویزات فراہم نہیں کی گئیں
کراچی(رپورٹ۔فرید عالم)وزیر بلدیات کے دعوے دھرے رہے گئے حکومت سندھ کی مبینہ سرپرستی میںبلدیاتی اداروں میں لوٹ مار کا بازار گرم ،سرکاری افسران کا بلدیاتی الیکشن سے قبل کروڑوں روپے ٹھکانے کالگانے منصوبہ،ایف آئی اے،نیب اور اینٹی کرپشن سمیت قانون نافذ کرنے والے ادارے بلدیاتی افسران کو قابو کرنے میں مکمل طور پر ناکام ہوگئے، بلدیہ ضلع شرقی میں کروڑوں روپے کے ترقیاتی منصوبوں کی بندر بانٹ،گاربیج کلیکشن کا ٹھیکہ من پسند ٹھیکیدارکو دینے کی تیاریاں مکمل۔تفصیلات کے مطابق بلدیہ ضلع شرقی کے جمشید زون اور گلشن اقبال زون میں کروڑوں کے ترقیاتی منصبوں کی مبینہ طور پر بندر بانٹ کرنے کی تیاریاں کرلی گئی ہیں،انتہائی باوثوق ذرائع کے مطابق ضلع شرقی کے جمشید زون میں گاربیج کلیکشن کا کروڑوں روپے کا کام من پسند ٹھیکیدارکو دینے کیلئے دیگر کنٹریکٹرز کو ٹینڈر ڈاکومنٹ ہی فراہم نہیں کئے گئے،گذشتہ روز ٹینڈر فراہم اور جمع کرانے کی آخری تاریخ گزرنے کے باوجود ٹینڈر کلرک یاسر گل کی جانب سے ڈاکومنٹ فراہم نہ ہونے پر کنٹریکٹرز میں شدید تشویش پھیل گئی ذرائع کا کہنا ہے کہ اس حوالے سے بعض کنٹریکٹرز نے ایڈ منسٹریٹر بلدیہ شرقی سمیت دیگر حکام کو بھی آگاہ کیا تاہم اس حوالے سے کسی قسم کا نوٹس نہیں لیا گیا،ذرائع کے مطابق آج مذکورہ ٹینڈر کھول کر من پسند ٹھیکیداروںکو نوازنے کی مبینہ طور پر تیاریاں مکمل کرلی گئی ہیں،اسی طرح گلشن اقبال زون میں بی اینڈ آر کے کروڑوں روپے لاگت کے کام بھی افسران نے مک مکا کر کے ٹھکانے لگانے کی تیاریاں کی ہیں،ذرائع کا کہنا ہے کہ بی اینڈ آر کے کاموں کو پول کر کے ٹھکانے لگایا جائے گا،جس کیلئے ٹھیکیداروں اور افسران میں مبینہ بھاری نزرانوں کے عوض مک مکا ہوگیا ہے،ذرائع نے مزید بتایا ہے کہ اس حوالے سے ایڈ منسٹریٹر ضلع شرقی تما م تر صورتحال کا علم ہونے کے باوجود پراسرار خاموشی اختیار کئے ہوئے ہیں،ضلع شرقی میں ترقیاتی کاموں کی بندر بانٹ پر ٹھیکیداروں نے تحقیقاتی اداروں سمیت حکومت سندھ کے اعلی حکام سے فوری نوٹس لینے اور آج کھولے جانے والے ٹینڈرز کو منسوخ کرکے قوانین کے مطابق ٹینڈرز کرانے کا مطالبہ کیا ہے۔

Tags: