وحدت المسلمین کا نیشنل ایکشن پلان اور اپیکس کمیٹی پر عدم اعتماد

October 28, 2015 2:18 pm0 commentsViews: 17

یہ ادارے جن مقاصد کیلئے بنائے گئے تھے ان پر عمل نہیں ہو رہا، علامہ ناصر عباس جعفری
سانحہ جیکب آباد کا مقدمہ فوجی عدالت میں چلایا جائے، مولانا افتخار امامی و دیگر کے ہمراہ پریس کانفرنس
کراچی( اسٹاف رپورٹر) مجلس وحدت المسلمین کے سیکریٹری جنرل علامہ راجہ ناصر عباس جعفری نے نیشنل ایکشن پلان اور ایپکس کمیٹی پر عدم اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ جن مقاصد کیلئے یہ ادارے بنائے گئے تھے ان پر عمل نہیں ہو رہا ہے انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ سانحہ جیکب آباد کا مقدمہ فوجی عدالت میں چلایا جائے۔ سانحہ کے متاثرین نے فیصلہ کیا ہے کہ20 محرم الحرام کو سانحہ کے خلاف جیکب آباد میں احتجاج کیا جائے گا وہ منگل کو مقامی ہال میں پریس کانفرنس سے خطاب کر رہے تھے اس موقع پر مولانا مختار امامی، باقر زیدی اور اقبال حیدر بھی موجود تھے۔ ناصر عباس جعفری نے کہا کہ سانحہ شکار پور پر ہم سے حکومت اور قانون نافذ کرنے والے اداروں نے وعدہ کیا تھا کہ سندھ بھر میں آپریشن کیا جائے گا۔ لیکن ایسا نہیں ہوا۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے آپریشن ضرب عضب کی بھر پور حمایت کی تھی لیکن اب ہم اس سے مایوس ہو رہے ہیں پنجاب میں نیشنل ایکشن پلان کے نام پر علماء کی زبان بندی اور ضلع بندی ہمارے آئینی و جمہوری اور قانونی حقوق پر شب خون مارنے کے مترادف ہے۔