ہاکس بے میں8 کلومیٹر روڈ کا ٹھیکہ ایک ارب 13 کروڑ میں دینے کا انکشاف

October 29, 2015 3:22 pm0 commentsViews: 23

14 کروڑ روپے فی کلومیٹر کا ٹھیکہ دیا گیا، سندھ ہائی کورٹ نے ٹھیکیدار کو رقم کی ادائیگی روکنے کا حکم دیا
سندھ بھر میں سڑکوں کے ٹھیکے ایک کروڑ فی کلو میٹر دیے گئے، نیب سے تحقیقات کرائی جائے،د رخواست گزار
کراچی( کرائم ڈیسک) لیاری ڈیولپمنٹ اتھارٹی( ایل ڈی اے ) میں سڑک کی تعمیر میں ہونیوالی کرپشن کے خلاف درخواست پر عدالت عالیہ سندھ نے ایل ڈی اے کو ٹھیکیدار کو رقم کی ادائیگی سے روکتے ہوئے فیصلہ 6 نومبر تک محفوظ کر لیا۔ بدھ کو چیف جسٹس فیصل عرب کی سربراہی میں قائم2رکنی بنچ نے میسرز راس کمیونیکیشن کی آئینی درخواست کی سماعت کی۔ درخواست گزار نے ایل ڈی اے کے زیر انتظام ہاکس بے میں8 کلو میٹر روڈ کا ٹینڈرز 1.13 ارب روپے میں دینے کے حوالے سے جواب الجواب جمع کرایا جس میں کہا گیا ہے کہ مذکورہ ٹھیکہ بد نیتی پر دیا گیا جبکہ ایل ڈی اے نے نجی کنٹریکٹرز فرینڈز کی جانب سے بھی جواب داخل کرا دیا جو کنٹریکٹر خود داخل کرانا چاہتے تھے۔ ٹینڈرز پر دستخط کرنے والے افسران کرپشن کے مقدمے میں سہولت کار ہیں۔ درخواست گزار کے وکیل ظفر احمد خان ایڈووکیٹ نے دلائل دیے کہ ایل ڈی اے نے ٹھیکیدار کو 14 کروڑ روپے فی کلو میٹر کے حساب سے ٹھیکہ دیا جو مارکیٹ ریٹ سے زیادہ ہے اس طرح قومی خزانے کو بھاری مالی نقصان پہنچایا گیا ہے۔ نیب کے ذریعے ٹھیکے کی تحقیقات کرائی جائیں۔ پورے سندھ میں سڑکوں کے ٹھیکے ایک کروڑ روپے فی کلو میٹر میں دئیے گئے۔ سانحہ صفورا کے بعد الاظہر گارڈن کی سڑک کا ٹھیکہ ہنگامی بنیادوں پر ساڑھے12 کروڑ میں دیا گیا جو 20 روز میں مکمل بھی ہوا۔

Tags: