ایس بی سی اے کے با اثر او پی ایس افسران کیخلاف کارروائی سے گریز

October 29, 2015 4:02 pm0 commentsViews: 66

با اثر افسران کو سابق ڈی جی کے دور میں نواز نے کیلئے گریڈ19 کے عہدوں پر تعینات کیا گیا تھا
کراچی(سٹی رپورٹر)قائم مقام ڈائریکٹر جنرل سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی ممتاز حیدر نے سپریم کورٹ کے واضح احکامات اور سندھ حکومت کی جانب سے متعدد مرتبہ ہدایات کے باوجود ادارے میں تعینات انتہائی بااثر او پی ایس افسران کے خلاف کارروائی سے تاحال گریزاں ہیںذرائع کا دعویٰ ہے کہ ایس بی سی اے کراچی زون میں اس وقت گریڈ18 کے کم از کم8افسران گریڈ19کے عہدوں پر تعینات ہیںجن میں گریڈ18طاہر نثارگریڈ19کے عہدے پر ڈائریکٹر گلبرگ ٹائون گریڈ18کے جمیل احمد میمن گریڈ19کے عہدے پر ڈائریکٹر آف بلڈنگ لانڈھی ٹائون گریڈ18عمر مقبول گریڈ19کے عہدے ڈائریکٹر لیاقت آباد ٹائون گریڈ18کے عبدلحمیدزرداری ڈائریکٹرگلشن ٹائون گریڈ18کے صفدر علی مگسی ڈائریکٹر جمشید ٹائون گریڈ18کے سرفراز حسین ڈائریکٹر گڈاپ ٹائون گریڈ18کے علی مہدی کاظمی ڈائریکٹر ویجلینس گریڈ18کے سُہیل ممتازڈائریکٹر اسٹرکچر اینڈ ڈئزائن گریڈ18کے علی غفران ڈائریکٹر ٹائون پلاننگ تعینات ہیں ذرائع کے مطابق سپریم کورٹ کے احکامات اور سندھ حکومت کی ہدایات کے بعدقائم مقام ڈی جی ایس بی سی اے ممتاز حیدر نے متعدد انسپکٹرز اور اسسٹنٹ دائریکٹرز بلڈنگز کو اُنکے عہدوں سے یہ کہہ کر ہٹادیا تھا کہ یہ افسران او پی ایس ہیں تاہم وہ بااثر او پی ایس افسران کے خلاف کارروائی گریزاں ہیں ذرائع کا کہنا ہے کہ بااثر او پی ایس افسران کو سابق ڈی جی ایس بی سی اے منظور قادر کاکا کے دور میں خصوصی طور پر نوازنے کے لئے گریڈ19کے عہدوں پر تعینات کیا گیا تھا اور اس تعیناتی کے دوران ادارے کی سنیارٹی لست کو بھی نذر انداز کر دیا گیا تھا۔

Tags: