قومی شاہراہ،ٹول پلازہ کے عملے کا مسافروں پرتشدد، متاثرین کا مظاہرہ

October 30, 2015 2:29 pm0 commentsViews: 18

این ایل سی کے ریٹائرڈ میجر کی زیرنگرانی عملہ مسافروں اور گاڑیوں سے ٹیکس وصول کے نام پرتشدد اور بدتمیزی کرتا ہے
نارواسلوک اور مبینہ لوٹ مار کے خلاف مقامی افراد اور مسافر سراپا احتجاج، ریٹائرڈمیجر کی صحافیوں سے بھی بدتمیزی
کراچی( نیوز ایجنسیاں) قومی شاہراہ پر سسی ٹول پلازہ کے مقام پر ٹیکس کی ادائیگی کے نام پر این ایل سی کے ریٹائرڈ میجر کے زیر نگرانی عملے کا مسافروں پر غیر انسانی تشدد پر خواتین سمیت متاثرہ مسافروں کا قومی شاہراہ پر سخت احتجاجی مظاہرہ‘ کوریج کیلئے آنیوالے صحافیوں سے بھی بد تمیزی‘ پر تشدد واقعات کیخلاف علاقہ مکینوں نے سخت رد عمل کرتے ہوئے وفاقی اور صوبائی ارباب اختیار سے فوری مداخلت کی اپیل کردی‘ تفصیلات کے مطابق گزشتہ چند روز سے ٹول پلازہ قومی شاہراہ پر آنے جانیوالے مسافروں‘ گاڑیوں سے ٹیکس کی وصولی کے نام پر مسافروں پر تشدد‘گالم گلوچ اور بد تمیزی کے متعدد واقعات رونما ہوچکے ہیں‘ بالخصوص ٹھٹھہ کے آثآر قدیمہ اور تفریح مقامات پر آنے جانے والے ہزاروں عام مسافروں اور مقامی افراد سے این ایل سی کے مقامی انچارج میجر (ر) فاروق کی زیر نگرانی ٹیم کے دیگرافراد کی جانب سے ناروا سلوک اور مبینہ لوٹ مار کیخلاف ہزاروں افراد سراپا احتجاج بن گئے‘ مذکورہ میجر(ر) آگ بگولا ہو کر عوام پر اسلحہ تان بیٹھا جس سے عوام میں سخت اشتعال پھیل گیا اور انہوں نے میجر (ر) کیخلاف سخت نعرے بازی کی‘ اطلاع ملتے ہی ملیر کے سینئر صحافیوں کی ٹیم رپورٹنگ کیلئے وقوع پر پہنچی تو میجر فاروق نے صحافیوں سے شائستہ گفتگو کے برعکس حواس باختہ ہو کر ان سے بھی توہین آمیز رویہ اختیار کیا۔

Tags: