جامعہ ہمدرد کا بنیادی مقصد تحقیق ہے، حکیم عبدالحنان

October 30, 2015 2:43 pm0 commentsViews: 98

حکیم سعید کا مزاج بھی سائنسی تھا، ہمدرد یونیورسٹی طلبہ کو ریسرچ کے مواقع فراہم کرتی ہے، سیمینار سے خطاب
کراچی( اسٹاف رپورٹر) ہمدرد یونیورسٹی کے وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر حکیم عبدالحنان نے کہا ہے کہ علمی تحقیق ہی کسی یونیورسٹی کو یونیورسٹی کا درجہ دیتی ہے۔ یہ بات انہوں نے ہمدرد کالج آف میڈیسن اینڈ ڈسپنسری ہمدرد یونیورسٹی کے زیر اہتمام منعقدہ سالانہ طلبہ ریسرچ پریزنٹیشن کے ایک روزہ سیمینار سے ہمدرد یونیورسٹی کے مین کیمپس مدینۃ الحکمۃ کراچی میں خطاب کرتے ہوئے کہی۔ انہوں نے کہا کہ جامعہ ہمدرد کا بنیادی مقصد تحقیق ہے کیونکہ جامعہ ہمدرد کے بانی شہید حکیم محمد سعید کا مزاج بھی سائنسی تھا۔ انہوں نے کمیونٹی ہیلتھ سائنسز ڈیپارٹمنٹ کی طرف سے تعلیمی سرگرمیوں کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ ہمدرد یونیورسٹی طالب علموں کو تربیت کیلئے مواقع فراہم کر تی ہے۔ تا کہ وہ اندر چھپی ہوئی صلاحیتوں کو بروئے کار لاسکیں، تقریب میں ہمدرد یونیورسٹی کی چانسلر محترمہ سعدیہ راشد بھی موجود تھیں اس موقع پر ہمدرد یونیورسٹی کے فیکلٹی آف ہیلتھ اینڈ میڈیکل سائنسز کے ڈین پروفیسر ڈاکٹر محمد جاوید نے ریسرچ کی اہمیت کو اجاگر کرتے ہوئے کہا کہ دنیا سے پولیو کا خاتمہ ہوگیا مگر پاکستان میں اب بھی اس کا وائرس موجود ہے۔ ضرورت اس بات کی ہے کہ ڈینگی، پولیو سمیت دیگر بیماریوں کے بارے میں ریسرچ کی جائے۔