سپر ہائی وے ایدھی ویلج کے قریب سے4 افراد کے ڈھانچے برآمد

November 2, 2015 3:01 pm0 commentsViews: 29

ڈھانچے ڈھا ئی ماہ پرانے معلوم ہوتے ہیں شناخت ناممکن ہوگی، پولیس نے ڈھانچوں کو اسپتال پہنچا دیا
کراچی(کرائم رپورٹر)سپرہائی وے ایدھی ولیج کے قریب سے4افراد کے ڈھانچے برآمد ہوئے، پولیس کے مطابق ڈھانچے دوسے ڈھائی ماہ پرانے معلوم ہوتے ہیں۔تفصیلات کے مطابق گڈاپ سٹی کے علاقے سپر ہائی وے ایدھی ولیج نزدنیشنل ہائی وے اتھارٹی کے پرانے دفتر کے پانی کے خشک ٹینک سے اتوار کی دوپہرچارافرادکے ڈھانچے برآمد ہوئے،واقعہ کی اطلاع پر پولیس موقع پر پہنچ گئی، چاروں ڈھانچوں کو اسپتال منتقل کیا،ایس ایچ او عبدالخالق مروت نے بتایا کہ ڈھانچوں کی حالت اس قدر خراب تھی کہ انھیں اٹھانے کے دوران یہ خدشہ تھا کہ وہ ٹوٹ نہ جائیں،پولیس نے بتایاکہ1985میں جب سپر ہائی پر کام کیا جارہا تھا کہ اس وقت این ایچ اے نے اپنا ایک دفتر بنایا تھا اور اس ہی دوران ایک پانی کا ٹینک بھی بنایا گیاتھا،جب انکا کام ختم ہوا تو اسکے بعد سے اس ٹینک میں پانی نہیں بھرا گیا اور جس مقام سے ڈھانچے ملے وہاں لوگوں کا آنا جانا بھی نہ ہونے کے برابر ہے ،پولیس کے مطابق ڈھانچے دو سے ڈھائی ماہ پرانے معلوم ہوتے ہیں اور انکی شناخت بھی ناممکن ہے۔واضح رہے کہ گڈاپ سٹی کے علاقے سے ماضی میں بھی کئی افراد کی لاشیں مل چکی ہیں۔

Tags: