IMF کادبائو بجلی کی قیمتوں میں فی یونٹ ایک روپے کا اضافہ کرنے کی تیاری

November 2, 2015 3:07 pm0 commentsViews: 14

بجلی کی پیداواری لاگت اور قیمت فروخت کا فرق ختم کرنے کیلئے قیمت بڑھائی جائے اور سبسڈی دینے کی روایت ختم کردی جائے
توانائی کے شعبے میں اصلاحات تیز کرنے پر زور‘ حکومت اور آئی ایم ایف کے درمیان 6 ارب 64 کروڑ ڈالر کے قرضے کیلئے مذاکرات 4 نومبر کو ختم ہوں گے
اسلام آباد( نیوز ڈیسک) عالمی مالیاتی فنڈ نے ایک بار پھر حکومت پر زور دیا ہے کہ توانائی کے شعبے میں اصلاحات کا عمل تیز کرنے کیلئے سبسڈی ختم کی جائے۔ اس کے نتیجے میں بجلی مزید مہنگی کر دی جائے گی۔ عالمی مالیاتی فنڈ کی ہدایت کی روشنی میں حکومت نے بجلی مزید مہنگی کرنے کی تیاریاں شروع کر دی ہیں آئی ایم ایف چاہتا ہے کہ بجلی کی پیداواری لاگت اور قیمت فروخت کو ختم کرنے کیلئے جلد بجلی کے نرخ بڑھائے جائیں اور سبسڈی دینے کی روایت ختم کی جائے۔ پاکستان اور آئی ایم ایف کے درمیان26 اکتوبر سے دبئی میں جاری نویں جائزہ مذاکرات کے تحت تکنیکی مذاکرات ختم ہوگئے ہیں جبکہ کل سے پالیسی سطح پر مذاکرات شروع ہوں گے جس میں پاکستانی وفد کی قیادت وزیر خزانہ اسحاق ڈار کریں گے۔ خدشہ ظاہر کیا جا رہاہے ہے کہ بجلی کے نرخ میں ایک روپے فی یونٹ تک اضافہ کیا جا سکتا ہے ، آئی ایم ایف نے بجلی چوری پر قابو پانے کیلئے عملی اقدامات، توانائی کے شعبے میں اصلاحات کا عمل تیز کرنے اور بجلی کی تقسیم کار کمپنیوں کی ترجیحی بنیادوں پر نجکاری پر بھی زور دیا ہے۔ حکومت اور آئی ایم ایف کے درمیان چھ ارب64 کروڑ ڈالر کے قرضے کے پروگرام کے تحت نویں جائزہ مذاکرات4 نومبر کو ختم ہوں گے۔ مذاکرات کی کامیابی کی صورت میں پاکستان کیلئے پچاس کروڑ ڈالر کی دسویں قسط جاری کی جائے گی۔

Tags: