صحافیوں اور میڈیا ورکرز کے قاتلوں کو انصاف کے کٹہرے میں لایاجائے، پی ایف یو جے

November 2, 2015 3:34 pm0 commentsViews: 19

ملک میں 100 سے زائد صحافیوں او رمیڈیا ورکرز کو قتل کردیا گیا، صرف2کیسوں میں گرفتاری وسزا ہوئی
پاکستان صحافت کے لحاظ سے دنیا کے چند خطرناک ترین ممالک میں شامل ہے، رانا محمد عظیم اور امین یوسف
کراچی( اسٹاف رپورٹر) پاکستان فیڈرل یونین آف جرنلسٹس(پی ایف یو جے) نے وزیراعظم محمد نواز شریف سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ پاکستان میں صحافیوں اور میڈیا ورکرز کے قاتلوں کو انصاف کے کٹہرے میں لائیں‘ ملک میں100 سے زائد صحافیوں اور میڈیا ورکرز کو قتل کردیا گیا لیکن افسوس کی بات ہے کہ صرف 2 کیسوں میں گرفتاری و سزا سنائی گئی ہے‘ سزا سے مستثنیٰ کے حوالے سے منائے جانیوالے اقوام متحدہ کے عالمی دن کے موقع پر پی ایف یو جے کے صدر رانا عظیم اور سیکریٹری جنرل امین یوسف نے جاری بیان میں کہا کہ پاکستان اب بھی صحافت کے اعتبار سے دنیا کے چند خطرناک ترین ممالک میںشامل ہے جہاں صحافی‘ کیمرہ مین‘ فوٹو گرافرز اور فیلڈ میں کام کرنیوالے میڈیا ورکرز کو مسلسل نشانہ بنایا جارہاہے2015 ء میں دنیا بھر میں اب تک86 صحافیوں اور میڈیا ورکرز کو قتل کیا جاچکا ہے جن میں3 کاتعلق پاکستان سے ہے جبکہ رپورٹ کے مطابق 2001 ء سے اب تک صحافیوں اور میڈیا ورکرز کے قتل‘ انہیں زخمی کرنے‘ اغواء و حراست میں رکھنے اور ان پر حملہ کرنے کے384 واقعات ہوچکے ہیں لیکن افسوسناک پہلو یہ ہے کہ سوائے2 کیسوں کے کسی بھی کیس میں سزا تو درکنار کوئی گرفتاری عمل میں نہیں آئی۔