لاہور میں‘فیکٹری کے ملبے تلے دبے 20مزدوروں کی لاشیں نکال لی گئیں

November 5, 2015 5:56 pm0 commentsViews: 20

سندر انڈسٹریل ایریا میں 4 منزلہ فیکٹری کی عمارت میں تعمیراتی کام جاری تھا کہ اچانک عمارت ہولناک دھماکے سے گرگئی
فیکٹری کے 200 سے زائد مزدور ملبے تلے دب گئے‘مالک اور اس کے بچے بھی شامل ہیں‘ پاک فوج اور ریسکیو ٹیمیں امدادی کارروائی میں مصروف
لاہور( مانیٹرنگ ڈیسک) لاہور کے سندر انڈسٹریل اسٹیٹ میں فیکٹری کی4 منزلہ عمارت زمین بوس ہوگئی جس سے فیکٹری مالک سمیت200 سے زائد مزدور ملبے تلے دب  گئے۔ عمارت کے ملبے سے  20 مزدوروں کی لاشیں نکال لی گئیں ہیں جبکہ 78 سے زائد کو فوری طور پر اسپتال منتقل کر دیا گیا۔ حادثے کے فوری بعد امدادی کارروائیوں کے سلسلے میں کرینیں ملبہ ہٹانے میں مصروف ہیں جبکہ فوج کے جوان اور ریسکیو ٹیمیں امدادی کاموں میں مصروف ہیں  لاہور کے علاقے سندر انڈسٹریل ایریا میں4 منزلہ فیکٹری کی عمارت کی اوپری دو منزلوں پر تعمیراتی کام جاری تھا کہ اس دوران عمارت نیچے آگری جس کے نتیجے میں200 سے زائد مزدور ملبے تلے دب گئے۔ حادثے کے بعد علاقہ مکینوں نے اپنی مدد آپ کے تحت امدادی کارروائیاں کو شروع کر دیں اور ملبے سے اب تک 20 افراد کی لاشیں نکال لی ہیں ملبے تلے دبے دیگر زخمیوں کو قریبی اسپتال منتقل کر دیا گیا ہے۔ حادثے کے بعد لاہور کے اسپتالوں میں ایمر جنسی نافذ کر دیگئی ہے ذرائع کے مطابق سندر انڈسٹریل اسٹیٹ میں قائم اشرف نامی شخص کی فیکٹری میں شاپنگ بیگ بنانے کا کام کیا جاتا ہے جس میں ایک شفٹ  میں400 افراد کام کرتے ہیں تاہم عمارت کے ملبے تلے 200 سے زائد افراد کے دبے ہونے کا خدشہ ظاہر کیا جا رہا  ہے جس کے باعث اموات میں اضافہ ہونے کا خدشہ ہے۔ حادثہ کے بعد انڈسٹریل ٹی ایم اے، ایل ڈی اے اور ٹائون انتظامیہ حادثہ کی ذمہ داری ایک دوسرے پر ڈالتے رہے۔ علاوہ ازیں وزیر اعظم اور وزیر اعلیٰ پنجاب نے واقعہ کا نوٹس لے کر امدادی کارروائیاں تیز کرنے کی ہدایت کر دی جبکہ شہباز شریف نے اسپتال میں زخمیوں کی عیادت بھی کی۔

Tags: