دھماکہ خیز مواد رکھنے کے مجرم کو21 برس قید

November 10, 2015 5:16 pm0 commentsViews: 14

نفیس الغنی کو جرم ثابت ہونے پر50 ہزار جرمانہ بھی عائد کر دیا گیا، عدم ادائیگی پر قید با مشقت کاٹنا ہوگی
اسلحہ رکھنے کے جرم میں عدنان کو سات برس قید کی سزا، دونوں کا تعلق سیاسی جماعت سے ہے
کراچی( اسٹاف رپورٹر) انسداد دہشت گردی کی عدالت نے دھماکہ خیز مواد اور اسلحہ ایکٹ کے مقدمات میں نامزد ملزم نفیس الغنی کو جرم ثابت ہونے پر مجموعی طور پر 21 سال کی سزا سنا دی ۔ عدالت نے ملزم کو دھماکہ خیز مواد رکھنے کے الزام میں14 سال قید بامشقت،50ہزار روپے جرمانہ اور عدم ادائیگی کی صورت میں مزید 2 ماہ قید بامشقت جبکہ غیر قانونی اسلحہ رکھنے کے مقدمے میں 7سال قید بامشقت، 25 ہزار روپے جرمانہ اور جرمانہ ادا نہ کرنے پر مزید2 ماہ قید بامشقت کی سزا سنائی ہے۔ دونوں سزائیں ساتھ چلیں گی۔ جبکہ دوسرے ملزم عدنان کو عدالت نے اسلحہ ایکٹ کے مقدمے میں7 سال قید بامشقت اور25 ہزار روپے جرمانے کی سزا سنائی ہے۔ جرمانہ ادا نہ کرنے کی صورت میں ملزم کو مزید 2  ماہ قید بامشقت کی سزا سنائی  ہے۔ جبکہ دوسرے ملزم عدنان کو عدالت نے اسلحہ ایکٹ کے مقدمے میں7 سال قید مشقت اور25  ہزار روپے جرمانہ کی سزا سنائی ہے۔ جرمانہ ادا نہ کرنے کی صورت میں ملزم کو مزید2 ماہ قید با مشقت کی سزا بھگتنا ہوگی۔ ملزمان کا جیل میں گزارا ہوا عرصہ سزا میں شمار ہوگا۔ ملزم نفیس کسٹڈی اور ملزم عدنان ضمانت پر تھا۔ استغاثہ کے مطابق پولیس نے ملزمان کو 8 مئی 2014 کو مین شاہراہ عراق نزد نوبہار ہوٹل سے گرفتار کیا تھا۔ ملزم نفیس کے قبضے سے 8 ایم ایم رائفل  بمعہ 10 زندہ گولیاں، رائفل گرینیڈ جبکہ ملزم عدنان سے30 بور پستول معہ 5 زندہ گولیاں بر آمد ہوئی تھیں۔ ملزمان کا تعلق ایک سیاسی جماعت سے ہے۔

Tags: