اسٹیل مصنوعات کی ڈمپنگ سے حکومت کو 17 ارب کا نقصان

November 10, 2015 5:43 pm0 commentsViews: 22

بریکنگ انڈسٹری نے صرف 40 کروڑ کے ٹیکس جمع کرائے ہیں، اسٹیل مصنوعات کی درآمدپر ڈیوٹی میں اضافہ کیاجائے، شعیب سلطان
کراچی(اسٹاف رپورٹر) ملک میں تیار اسٹیل مصنوعات کی بے دریغ درآمدات کے نتیجے میں سال 2014-15ء میں 12.6ارب روپے کے ٹیکسز اور ڈیوٹی جمع کرانے والی شپ بریکنگ انڈسٹری نے 2015-16ء کی پہلی سہ ماہی میں صرف 40کروڑ روپے کے ٹیکسز جمع کرائے ہیں اور خدشہ ظاہر کیا جارہا ہے کہ پورے سال میں ایف بی آر صرف شپ بریکنگ انڈسٹری سے ایک ارب کے محاصل ہی جمع کرپائے گا جوکہ پچھلے سال کے مقابلے میں 11.5ارب کم ہوں گے۔پاکستان شپ بریکرز ایسوسی ایشن کی ایگزیکٹو کمیٹی کے ممبر اور ہور ائزون شپ ریسائیکلنگ کے مالک شعیب سلطان نے بتایاکہ ہم حکومت سے مستقل مطالبہ کررہے ہیں کہ ملک میں تیار اسٹیل مصنوعات کی درآمد پر ڈیوٹی میں اضافہ کیا جائے اور مقامی انڈسٹری کو مساویانہ مسابقتی ماحول فراہم کیا جائے ورنہ شپ بریکنگ انڈسٹری جوکہ پہلے ہی تباہی کے دہانے پر ہے مکمل طورپر بند ہوجائے گی۔ انہوں نے کہاکہ موجودہ سال میں حکومت 11.5ارب روپے کا نقصان صرف شپ بریکنگ انڈسٹری سے ٹیکسز نہ ملنے کی صورت میں اٹھائے گی۔

Tags: