اربوں کی کرپشن میں مطلوب شاہد جتوئی ممبر محتسب سندھ مقرر

November 19, 2015 3:56 pm0 commentsViews: 16

نیب کو مطلوب سابق ممبر ایف بی آر کے عہدے پر تعیناتی کے دوران اربوں روپے کی خوردبرد سے ملک اور بیرون ملک اثاثے بنائے
ڈیفنس میں بنگلہ، ملائیشیا میں ہوٹل ،گھر اوردنیاکی قیمتی لگژری گاڑیاں بھی زیراستعمال ہیں
اسلام آباد( آن لائن) اربوں روپے کی کرپشن میں ملوث اور نیب کو مطلوب سابق ممبر ایف بی آر شاہد جتوئی کو ممبر محتسب سندھ مقرر کر دیا گیا ہے کرپٹ اور ملزم شخص کو انصاف کے اعلیٰ منصب پر فائز کر دیا گیا ہے۔ شاہد جتوئی پر الزام ہے کہ انہوں نے بطور ممبر ایف بی آر اربوں روپے کی کرپشن کی ہے اور قومی خزانے کو نقصان پہنچایا ہے۔ ذرائع کے مطابق ملنے والی اشیاء شاہد جتوئی کی کرپشن کے دستاویزاتی ثبوت کے مطابق ملزم نے اربوں روپے کی کرپشن سے کراچی ڈیفنس ہائوسنگ سوسائٹی میں کروڑوں روپے کا بنگلہ خرید رکھا ہے۔ شاہد جتوئی نے کرپشن کے ذریعے دنیا کی قیمتی اور لگژری گاڑیاں جن میں لینڈ کروزر، فراری گاڑیاں وغیرہ بھی خریدی ہیں۔ کرپشن کی دولت سے انہوں نے ملائیشیا میں ایک ہوٹل بھی خریدا ہوا ہے جس کی مالیت2 ملین ڈالر ہے۔ سٹی اسپتال کراچی میں ان کی شراکت ہے۔ ملائیشیا میں گھر بھی خریدا ہے۔ اپنے بیٹوں کا دنیا کے لگژری تعلیمی اداروں میں داخلہ کرا رکھا ہے۔ ان کے بیٹے آسٹریلیا کے اعلیٰ تعلیمی اداروں اور بیٹی صباء جتوئی کو اعلیٰ تعلیمی ادارے میں داخل کرا رکھا ہے۔ رپورٹ کے مطابق شاہد جتوئی نے دعویٰ کیا ہے کہ انہوں نے یہ جائیداد دوستوں سے قرض لے کر خریدی ہے۔

Tags: