جمہوریت جاسکتی ہے، سیاسی مگرمچھوں کو تیور بدلنا ہونگے، مرزا اسلم بیگ

November 23, 2015 3:24 pm0 commentsViews: 31

نیشنل ایکشن پلان کے تحت زرداری ،الطاف حسین اور دیگر بڑے سیاسی مگرمچھوں کے خلاف گھیرا تنگ ہوا تو فوج کے خلاف تقریریں کرنے لگ گئے
نئی سرد جنگ شروع ہوگئی،روس، چین، پاکستان، ایران اور افغانستان پر مشتمل علاقائی اتحاد بننے جارہا ہے، سابق فوجی سربراہ
اسلام آباد( نیوز ڈیسک) پاک فوج کے سابق جنرل (ر) مرزا اسلم بیگ نے کہا ہے ملک میں گڈ گورننس کے حوالے سے فوج اور عدلیہ میں کوئی گٹھ جوڑ نہیں، تاہم جمہوریت پر خطرات ضرور منڈلا رہے ہیں۔ سیاسی مگر مچھوں کو اپنے تیور بدلنا ہوں گے۔ سیاست دان اگر جمہوریت سنبھال سکتے ہیں تو سنبھالیں نہیں تو جمہوریت گئی۔ نیشنل ایکشن پلان کے تحت زرداری اور الطاف حسین اور دیگر بڑے سیاسی مگر مچھوں کے خلاف گھیرا تنگ ہوا تو وہ فوج کے خلاف تقریریں کرنے لگ گئے۔ 2016ء خطے میں غیر معمولی تبدیلیوں کا سال ہے۔ آئندہ برس تک پورے افغانستان میں طالبان کی حکومت قائم ہوجائے گی۔ کشمیریوں کی تحریک آزادی بھی کامیابی سے ہمکنار ہوگی دنیا میں نئی سرد جنگ شروع ہوگئی ہے۔ اس جنگ کی مرکزی سوچ اقتصادیات ہے اسی سوچ کے ساتھ روس، چین، ایران، افغانستان، اور پاکستان پر مشتمل علاقائی اتحاد بننے جا رہا ہے اس اتحاد کی تشکیل میں امریکا سمیت بعض طاقتیں رکاوٹ ڈال رہی ہیں۔ پاک چین اقتصادی راہداری منصونبے کے خلاف مسلسل سازشیں کی جا رہی ہیں۔ خطہ میں قیام امن کیلئے طالبان کی حقیقی حیثیت کو تسلیم کرنا ہوگا اور غالباً آرمی چیف جنرل راحیل شریف اسی حقیقت کو واضح کرنے کیلئے امریکا گئے تھے۔ امریکا افغان مجاہدین سے جنگ ہارنے کے بعد ایشیا پیسفک میں گھس آیا ہے۔ ماضی میں ہماری سیاسی و فوجی حکومتوں سے بھیانک غلطیاں ہوئیں جن کا خمیازہ ہم آج تک بھگت رہے ہیں لیکن اب غلطی کی کوئی گنجائش نہیں۔ یہی وجہ ہے کہ اب فیصلے قومی مفادات کو مد نظر رکھتے ہوئے کئے جا رہے ہیں۔ ملکی اور خطہ کی بدلتی ہوئی صورتحال پر خصوصی انٹر ویو دیتے ہوئے اسلم بیگ نے کہا کہ 2016ء کا سال افغان طالبان اور کشمیری مجاہدین کی کامیابی کا سال ہوگا۔

Tags: